.

اقوام متحدہ اور یورپی یونین شام میں خونریزی رکوائیں: سعودی وزیرخارجہ

سلامتی کونسل انسانی المیے کے خاتمے کے لیے اپنا کردار ادا کرے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل اور یورپی یونین کے وزرائے خارجہ سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ شام میں جاری قتل عام کو رکوائیں۔

سعودی عرب نے بدھ کو یہ بیان شامی فوج کے کیمیائی ہتھیاروں کے حملے میں ایک ہزار سے زیادہ افراد کی ہلاکتوں کی اطلاع منظر عام پر آنے کے بعد جاری کیا ہے۔

سعودی وزیرخارجہ شہزادہ سعودالفیصل نے بیان میں کہا کہ ''اب اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے لیے اپنی ذمے داری نبھانے کا وقت آگیا ہے۔ وہ فوری طور پر اپنا اجلاس بلائے اور شام میں جاری انسانی المیے کو روکنے کے لیے ایک واضح اور ٹھوس فیصلہ کرے''۔

انھوں نے اے ایف پی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ''ہم یورپی یونین کے وزرائے خارجہ سے بھی یہ مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ اپنی آج کی بات چیت میں شامی المیے کو مرکزی موضوع بنائیں''۔

یورپی یونین کے وزرائے خارجہ کا آج بدھ کو برسلز میں اجلاس ہو رہا ہے جس میں وہ مصر میں جاری بحران پر تبادلہ خیال کریں گے اور اس کے بعد وہ اس ملک کے ساتھ یورپی یونین کے سفارتی اور اقتصادی تعلقات کے بارے میں کوئی فیصلہ کریں گے لیکن سعودی وزیرخارجہ نے یورپی وزراء پر زور دیا ہے کہ وہ مصر کے بجائے شام کے بارے میں کوئی فیصلہ کریں۔