اسرائیل کے لیے جاسوسی کے الزام میں مصری وکیل کا 15 روزہ ریمانڈ

ملزم کو نیٹ کیفے سے عبرانی میں گفتگو کرتے پکڑا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

مصرکے شہر اسکندریہ کے پراسیکیوشن آفس نے اسرائیل کے لیے جاسوسی کے الزام میں ایک شخص کو پندرہ روزہ جوڈیشل ریمانڈ پرپولیس کے حوالے کیا ہے۔ حکام کے مطابق ملزم ایک سزا یافتہ وکیل ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق اسکندریہ میں الرمل پولیس تھانے میں مقامی شہریوں نے اطلاع دی کہ بازار روڈ پرواقع "سائبر" انٹرنیٹ کیفے میں ایک شخص عبرانی میں کسی سے آن لائن گفتگو کر رہا ہے۔ پولیس اہلکاروں نے فوری طور پر چھاپہ مار کر40 سالہ ایمن محمد متولی کو حراست میں لے لیا۔ ملزم نے پولیس کے سامنے ابتدائی بیان میں اسرائیل کے لیے جاسوسی سے انکار کیا ہے۔ اس کا کہنا ہے کہ وہ اٹلی میں اپنی ایک گرل فرینڈ کو عبرانی سکھا رہا تھا۔ نیز اس نے عبرانی سیکھنے کے لیے اپنے لیپ ٹاپ میں عبرانی زبان کا ایک سافٹ ویئر بھی انسٹال کر رکھا ہے۔

پولیس نے کہا کہ ملزم پہلے بھی چوری سمیت چار دیگر الزامات کے تحت عدالت کو مطلوب تھا۔ عدالت نے اس کی عدم موجودگی میں دو ماہ کے جوڈیشل ریمانڈ پر حراست میں لینے کا پہلے بھی حکم دے رکھا تھا۔ گرفتاری کے بعد ملزم کوعدالت میں پیش کیا گیا۔ عدالت نے اس کے پندرہ روزہ جسمانی ریمانڈ کا حکم دیا ہے۔ پولیس نے ملزم کا لیپ ٹاپ، موبائل فون اور دیگر سامان قبضے میں لے لیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں