شام، اقوام متحدہ کے معائنہ کاروں کو نہ روکے: امریکا

شامی وزیر خارجہ ولید المعلم سے جان کیری کی فون پر بات چیت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکی وزیر خارجہ جان کیری نے شام پر زور دیا ہے کہ کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کی زد میں آنے والے علاقے غوطہ تک اقوام متحدہ کے معانہ کاروں کو جانے کی اجازت دے۔ انہوں نے اس امر کا اظہار شام کے وزیر خارجہ ولید المعلم سے ٹیلی فون پر بات کرتے ہوئے کیا ہے۔

جان کیری کا کہنا تھا ''اس بات کو صاف ہونا چاہیے کہ شامی حکومت کا دمشق کے نزدیک غوطہ میں کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال سے کوئی تعلق نہیں ہے، نیز اس حوالے سے شام دنیا سے کچھ چھپانا نہیں چاہتا ہے تو شامی حکومت کو چاہیے کہ وہ اقوام متحدہ کے معائنہ کاروں کو بغیر کسی رکاوٹ کے متاثرہ علاقے میں جانے دے۔ بجائے اس کے کہ متاثرہ علاقے میں مزید حملے کر کے وہاں کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کی شہادتیں مٹائی جائیں ۔''

واضح رہے شامی حزب اختلاف کا موقف ہے کہ 21 اگست کو شامی حکومت نے وسیع پیمانے پر کیمیائی ہتھیار استعمال کر کے 1300 سے زائد بے گناہ شہریوں کو موت کے گھاٹ اتار دیا تھا۔

اس واقعے کی غیر جانبدارانہ تحقیقات کے لیے اقوام متحدہ کے معائنہ کار شام پہنچ چکے ہیں، لیکن انہیں حکومت متعلقہ علاقوں میں جانے کی اجازت نہیں دے رہی ہے۔ اس سلسلے میں اقوام متحدہ کی انڈر سیکرٹری جنرل انجیلا کین بھی شام آ چکی ہیں ۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں