شام کے خلاف کارروائی؟ امریکا، روس مذاکرات ملتوی

یکطرفہ طور پر ملاقات منسوخ کیے جانے پر روس کا اظہار افسوس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکا نے شام کے بارے میں پیدا ہونے والی غیر معمولی صورت حال اور اپنی تیاریوں کے آخری مرحلے میں داخل ہو جانے کے باعث روس کے ساتھ بدھ کے روز متوقع مذاکرات ملتوی کر دیے ہیں۔

امریکی دفتر خارجہ کے ایک سینئیر ذمہ دار کے مطابق امریکا کی جانب سے جاری مشاورت کے ریسپانس کے بعد یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ امریکی انڈر سیکرٹری کے ساتھ روسی وفد کی طے شدہ ملاقات فوری طور پر ملتوی کر دی جائے۔ روسی حکام کے ساتھ اب ملاقات طے کرنے کے لیے دوبارہ رابطہ ہو گا۔

امریکی عہدیدار نے مطابق 21 اگست کو شام میں کیمیائی ہتھیاروں سے ہونے والی سینکڑوں ہلاکتوں کے حوالے سے کہا ''شام میں جاری خونریزی کو روکنے کے لیے جامع اور پائیدار سیاسی حل کی ضرورت ہے۔'' دوسری جانب روس نے ملاقات ملتوی کرنے پر افسوس ظاہر کیا ہے۔ سینئیر روسی سفارت کار کے مطابق ''اس پر افسوس ہوا ہے کہ ہمارے شریک کار امریکہ نے دو طرفہ ملاقات منسوخ کر دیئے ہے۔''

روس کے نائب وزیر خارجہ گیناڈی گاتلوف سے منسوب ٹوئٹر پیغام میں کہا گیا ہے کہ ''ایک ایسے وقت میں جب فوجی کارروائی نے اس ملک کو لٹکا رکھا ہے، اس طرح کے مذاکرات بطور خاص مفید ہو سکتے تھے۔'' اس کے مقابلے میں وائٹ ہاوس کا کہنا ہے کہ ابھی کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کے ردعمل کا جائزہ لیا جا رہا ہے اور''ریسپانس'' کیا ہو گا اس کا فیصلہ ہونا باقی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں