.

مرسی کے خلاف 'قتل اور تشدد پر اکسانے' کا مقدمہ چلانے کا فیصلہ

اخوان احتجاج کیلے تیار، پولیس بھی الرٹ ہے: مصری وزارت داخلہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصرکے معزول صدر محمد مرسی کے ‌خلاف قتل پر اکسانے کے الزام میں مقدمہ چلایا جائے گا۔ مقدمے کی کارروائی کے آغاز کی تاریخ کا اعلان نہیں کیا گیا۔ اس امر کا اعلان مصر کے ریاستی ٹیلی وژن کی طرف سے کیا گیا۔

سرکاری نشریاتی ادارے کے مطابق مرسی اور ان کی اسلام پسند تحریک اخوان المسلمون کے 14 دیگر مشتبہ افراد کے خلاف یہ مقدمہ دسمبر 2012ء میں محمد مرسی کے حامیوں اور مخالفین کے مابین قاہرہ میں صدارتی محل کے قریب ہونے والی خونریز جھڑپوں کے سلسلے میں چلایا جائے گا۔ سرکاری ٹیلی وژن نے اتوار کی رات اپنی نشریات میں بتایا کہ اس مقدمے میں ملزمان کو اپنے خلاف قتل اور تشدد پر اکسانے کے الزامات کا سامنا کرنا ہو گا۔

محمد مرسی تین جولائی کو ملکی فوج کے ہاتھوں اپنی معزولی کے بعد سے ایک نامعلوم جگہ پر سکیورٹی فورسز کی حراست میں ہیں۔ ان کی برطرفی کے بعد شروع ہونے والے احتجاجی مظاہروں میں اب تک ایک ہزار سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

مصر کے ریاستی ٹیلی وژن نے فوج کی حمایت یافتہ موجودہ ملکی حکومت کے فیصلے کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا کہ محمد مرسی اور 14 دیگر ملزمان کا معاملہ ایک ایسی عدالت کے حوالے کر دیا گیا ہے، جو مجرمانہ نوعیت کے الزامات میں مقدمات کی سماعت کرتی ہے۔ سرکاری خبر رساں ادارے کے مطابق ریاستی دفتر استغاثہ کی طرف سے معزول صدر مرسی اور دیگر ملزمان پر قتل اور تشدد پر اکسانے کے سلسلے میں باقاعدہ فرد عائد کر دی گئی ہے۔

مرسی سمیت مجموعی طور پر15 ملزمان کو جن واقعات میں جواب دہ بنانے کا فیصلہ کیا گیا ہے، ان میں مرکزی اہمیت کے حامل قریب نو ماہ پہلے قاہرہ میں محمد مرسی کے حامیوں اور مخالفین کے مابین قصر صدارت کے قریب رونما ہونے والے خونریز تصادم کے وہ واقعات ہیں، جن میں تقریباﹰ ایک درجن افراد ہلاک ہو گئے تھے۔ اس مقدمے میں جن افراد کو مرسی کے ساتھ شریک ملزمان نامزد کیا گیا ہے، ان میں اخوان المسلمون اور اس کے سیاسی چہرہ فریڈم اینڈ جسٹس پارٹی کے کئی سرکردہ عہدیدار شامل ہیں۔

دوسری جانب اخوان المسلمون نے ملک گیر سطح پر احتجاج کی تیاری شروع کر دی ہے ۔ احتجاج فوج کی حمایت سے قائم ہونے والی عبوری حکوت کے خلاف ہو گا۔ اس صورت حال کے پیش نظر وزارت داخلہ نے خبردار کیا ہے کہ اس کی پولیس احتجاج روکنے کے لیے پوری طرح سے ہائی الرٹ پر ہے۔