تہران میں امریکی سفارت خانے پر حملہ آوروں کی سابق ترجمان نائب صدر مقرر

حسن روحانی نے علی شمخانی کو قومی سلامتی کونسل کا سربراہ مقرر کردیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ایران کے صدر حسن روحانی نے ماحولیات کی ماہر خاتون معصومہ ابتکار کو نائب صدارت کا منصب سونپا ہے۔

معصومہ ابتکار سنہ 1979ء میں تہران میں خمینی انقلاب کے وقت امریکی سفارت خانے کے عملے کو یرغمال بنانے والوں کی ترجمان رہی تھیں۔ وہ سابق صدر محمد خاتمی کے دورحکومت میں سنہ 1997ء سے 2005ء تک بھی ایران کی نائب صدر رہ چکی ہیں۔ اب انھیں ماحولیاتی امور کی نائب صدر مقرر کیا گیا ہے۔

یاد رہے کہ ایرانی یرغمالیوں نے 444 روز تک امریکی سفارت خانے کے عملے کو یرغمال بنائے رکھا تھا اور اس دوران معصومہ نے ان کے ترجمان کی حیثیت سے خدمات انجام دی تھیں اور عالمی سطح پر مقبولیت پائی تھی۔ بعد میں انھوں نے تہران کی میونسپل کونسل میں خدمات انجام دیں اور ماحولیات کی اسکالر بن گئیں۔

ایران کی سرکاری خبررساں ایجنسی ایرنا کی رپورٹ کے مطابق صدر حسن روحانی نے سابق وزیردفاع ایڈمرل علی شمخانی کو اعلیٰ قومی سلامتی کونسل کا سربراہ مقرر کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں