یمن: عسکریت پسندوں کی فائرنگ 2 فوجی ہلاک، متعدد زخمی

سکیورٹی اداروں پر حملوں کا الزام عام طور القاعدہ پر لگایا جاتا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمن کے جنوبی صوبے حضرموت میں نامعلوم حملہ آوروں کی فائرنگ سے دو یمنی فوجی ہلاک ہو گئے ہیں۔ اس سے پہلے ایک اور واقعے میں متعدد فوجی زخمی ہو گئے۔

یمن کے فوجی ذرائع نے بتایا ہے کہ ہفتہ کے روز عسکریت پسندوں کے ایک حملے میں دو یمنی فوجیوں کی ہلاکت کے علاوہ متعدد زخمی ہو گئے۔ حملہ آوروں نے الکتن کے قریب فوجی قافلے پر گھات لگا کر حملہ کیا ہے۔

سیکورٹی ذرائع نے ایک عالمی خبر رساں ادارے کو بتایا کہ گزشہ روز فوجی قافلہ جو کہ پٹرول ٹینکروں کے قافلے کے ہمراہ حفاظتی دستے کی صورت الحرا کے علاقے میں موجود تھا۔ کہ اچانک عسکریت پسندوں نے ان ٹینکروں پر حملہ کر دیا ۔ حملے کے نتیجے میں آئل ٹینکروں میں آگ بھڑک اٹھی، جس کے نتیجے میں کافی مالی نقصان کے علاوہ متعدد فوجی بھی زخمی ہو گئے، تاہم حملہ آور ٹینکروں کو نقصان پہنچانے کے بعد وہاں سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے۔

یمنی انتظامیہ نے ان حملوں کی ذمہ داری القاعدہ پر عائد کی ہے اور واضح کیا ہے کہ ملک کے مشرقی اور جنوبی علاقوں میں انتہا پسند اسلامی گروپوں کی طاقت میں اضافہ ہو گیا ہے

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں