.

سپین: شام کیلیے دہشت گرد بھرتی کرنے پر سرغنہ گرفتار

اس سے پہلے آٹھ افراد گرفتار ہوئے، تعلق القاعدہ سے بتایا جاتا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سپین کی سکیورٹی فورسز نے ایک ایسے شخص کو شام میں دہشت گرد گروپوں کی طرف سے لڑنے کے لیے بھرتیاں کرنے پر گرفتار کر لیا ہے۔ جسے ایک منظم دہشت گرد گروپ کا سرغنہ بتایا جاتا ہے۔

اس امر کا اعلان سپین کی وزارت داخلہ نے ایک جاری کردہ بیان میں کیا ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ گرفتار کیا گیا مبینہ دہشت گرد اس سے پہلے بھی درجنوں افراد کو دہشت گرد گروپ کے لیے بھرتی کر کے بھجوا چکا ہے۔

حکام نے حراست میں لیے گئے اس شخص کا نام یاسین احمد لاربی بتایا ہے اور کہا ہے کہ '' اسے کیوٹا شہر سے گرفتار کیا گیا ہے۔ اسی شہر سے ماہ جون میں بھی آٹھ افراد کو گرفتار کیا گیا تھا یاسین احمد اس سے پہلے بھی اس نوعیت کی سرگرمیوں کے باعث عدالت کو مطلوب تھا۔''

سپین حکام ے مطابق اس گروہ کا تعلق القاعدہ سے ہے۔ ان بھرتی کیے جانے والے افراد کو عسکری تربیت سے گذارا جانا تھا نیز کچھ کو خود کش حملوں کے لیے تیار کرنا تھا۔