.

دمشق میں روسی سفارت خانے پر مارٹر گولے کا حملہ

سفارت خانے کی عمارت کے احاطے میں گولہ گرنے سے تین ملازمین زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام کے دارالحکومت دمشق میں روسی سفارت خانے کے احاطے میں ایک مارٹر گولہ گرا ہے۔ اس کے پھٹنے سے سفارت خانے کے تین ملازمین زخمی ہوگئے ہیں۔

لندن میں قائم شامی آبزوریٹری برائے انسانی حقوق کی اطلاع کے مطابق اتوار کو مارٹرگولہ سفارت خانے کی مرکزی عمارت سے تھوڑی دور کھلی جگہ میں گرا ہے۔ شامی صدر بشارالاسد کی وفادار افواج سے برسرپیکار باغی جنگجو دمشق کے آس پاس واقع نواحی علاقوں میں محاذآراء ہیں اور وہ شہر کے مختلف علاقوں کی جانب اکثر راکٹ یا مارٹر گولے فائر کرتے رہتے ہیں۔

آبزرویٹری کا کہنا ہے کہ یہ پہلا موقع ہے کہ باغی جنگجوؤں نے روسی سفارت خانے کے کمپاؤنڈ کو نشانہ بنایا ہے۔ روس اب تک صدر بشارالاسد کا سب سے بڑا حامی اور مؤید رہا ہے اور اس نے شام کے کیمیائی ہتھیاروں کو ٹھکانے لگانے کے لیے امریکا کے ساتھ سمجھوتے میں اہم کردار ادا کیا ہے جس کے نتیجے میں شام پر امریکا کے ممکنہ حملے کو ٹالنے میں مدد ملی ہے۔