.

النصرہ فرنٹ نے اپنے کمانڈر کی ہلاکت کی تردید کر دی

شام کے سرکاری ٹی وی نے ابو محمد الجولانی کی ہلاکت کی خبر دی تھی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام میں القاعدہ سے منسلک جہادی گروپ النصرہ فرنٹ نے اپنے کمانڈر ابو محمد الجولانی کے بارے میں اطلاع دی ہے کہ بہتر حالت میں اور ان کی ہلاکت کی خبریں درست نہیں ہیں۔ اس سلسلے میں جہادی گروپ النصرہ فرنٹ کی جانب سے باضابطہ طور پر ایک بیان جاری کیا گیا ہے تاکہ اس تاثر کی تردید ہو سکے کے النصرہ کا کمانڈر مارا گیا ہے۔

اس سے پہلے شام کے سرکاری ٹی وی نے جمعہ کے روز نشر کی گئی ایک رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ ابو محمد الجولانی جسے النصرہ میں امیر کی پوزیشن حاصل ہے صوبہ لازقیہ کے ساحلی علاقے میں ایک جھڑپ میں مارا گیا ہے۔

النصرہ نے اپنے جاری کردہ بیان میں اس سرکاری رپورٹ کو جھوٹ پر مبنی قرار دیا گیا ہے۔ واضح رہے القاعدہ کمانڈر کی ہلاکت کی خبر کو سرکاری خبر رساں ادارے نے بھی فوری طور پر واپس لے لیا تھا۔

ادھر شام میں انسانی حقوق کی صورتحال کو مانیٹر کرنے والی این جی او آبزرویٹری نے بھی اپنے ذرائع سے حاصل کردہ اطلاعات اور النصرہ کے وابستگان کے حوالے النصرہ کمانڈر کے ہلاک نہ ہونے کی تصدیق کی ہے۔

واضح رہے شام میں بشارالاسد کے خلاف لڑنے والے باغی گروپوں میں النصرہ فرنٹ سب سے طاقتور گروپوں میں سے ایک گروپ ہے، تاہم امریکا نے النصرہ فرنٹ کو گزشتہ سال کے اواخر سے دہشت گرد گروپوں میں شامل کر رکھا ہے۔