.

عرب دوستوں پر حملے کی اجازت نہیں دیں گے: جان کیری

امریکی صدر کا وعدہ ہے کہ ایران کو جوہری ہتھیار نہیں بنانے دیں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

گیارہ عرب ملکوں کے دورے پر مصر کے بعد سعودی عرب پہنچنے والے امریکی وزیر خارجہ جان کیری نے عرب دوستوں کو دفاعی حوالے سے اطمینان دلانے کی کوشش کی ہے اور ایران کا نام لیے بغیر خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکا کسی کو باہر سے اپنے دوستوں پر حملہ کرنے کی اجازت نہیں دے گا۔

جان کیری جو سعودی ناراضگی کے اظہار کے بعد عرب دنیا کے مشرق وسطی میں امن کے موضوع پرباہمی اعتماد کو بہتر بنانے آئے ہیں نے اس حوالے سے اپنے دوستوں کا ذکر کرتے ہوئے بطور خاص سعودی عرب،متحدہ عرب امارات، قطر، اردن اور مصر کا نام بھی لیا۔

جان کیری نے سعودی عرب روانگی سےپہلے قاہرہ میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا ''کسی بیرونی حملے کی صورت میں ہم عرب ملکوں کے ساتھ کھڑے ہوں گے ۔''

واضح رہے سعودی حکام پہلے ہی یہ شکایت سامنے لا چکے ہیں کہ امریکا نے شام کے صدر بشارالاسد کو امریکا نے اپنے ہی عوام کے خلاف کرنے اور کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کے باوجو د سزا نہیں دی ہے۔

اس وجہ سے سعودی عرب اور اوباما انتظامیہ کے درمیان ایک ناراضی پیدا ہو چکی ہے ، جسے ختم کرنے کی ایک کوشش جان کیری سعودی وزیر خارجہ سعود الفیصل سے پیرس میں مل کر کر چکے ہیں۔

گزشتہ دنوں امریکی سینیٹروں کے ایک گروپ نے بھی صدر اوباما پر زور دیا تھا کہ عرب ملکوں کے ساتھ تعلقات میں پیدا ہونے والے رخنے کو دور کیا جائے۔

سعودی عرب صدر اوباما کے ایران کے بارے میں بڑھے ہوئے نرم سلوک پر بھی تحفظات رکھتا ہے ۔ اس امر کا جان کیری نے بھی اعتراف کیا ہے کہ خلیجی ریاستوں کے ساتھ شام کے معاملے میں اختلافات پیدا ہوئے ہیں، تاہم ان کا کہنا تھا کہ انہوں نے ان اختلافات کو کم کرنے کی بھی کوشش کی ہے۔

جان کیری کا کہنا تھا '' اس میں شک نہیں کہ طریقہ کار پر دونوں طرف اختلاف ہے لیکن سب کا اہداف کے حصول، خصوصا شام میں امن اور ایک عبوری حکومت کے قیام پر اتفاق ہے۔''

انہوں نے مزید کہا ''ہم پالیسی اور حکمت عملی کی پالیسی پر مختلف رائے رکھتے ہیں، بعض ملک کچھ اور چاہتے ہیں اور امریکا کچھ اور کر رہا ہے، لیکن بنیادی نوعیت کی چیزوں پراختلاف نہیں ہے۔''

ایران کے حوالے سے جان کیری نے دو ٹوک انداز میں کہا امریکا ایران کو جوہری اسلحہ رکھنے کی اجازت ہر گز نہیں دے گا۔'' جان کیری نے کہا ''ایران جوہری اسلحہ نہیں حاصل کر سکے گا یہ امریکی صدر اوباما کا وعدہ ہے۔