.

مصری ہیلی کاپٹروں کی غزہ کی فضائی حدود کی خلاف ورزی

مصر کی فوجی ہیلی کاپٹروں کی رفح پر بھی پروازیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصری فوج کے دو ہیلی کاپٹروں نے حماس کے زیر کنٹرول غزہ کے علاقے پر پرواز کی ہے۔ ان ہیلی کاپٹروں کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ یہ مصری ہیلی کاپٹر جنوبی شہر رفح کی طرف سے غزہ کی فضائی حدود میں داخل ہوئے تھے۔

عینی شاہدین کے حوالے سے خبر رساں ادارے "اناضول" کو معلوم ہوا ہے کہ مصر کے فوجی ہیلی کاپٹروں نے رفح کے تین مختلف اضلاع پر بھی پرواز کی اور کچھ دیر کیلیے علاقے میں موجود رہے۔ واضح رہے رفح سرنگوں کے ذریعے ملائے جانے کی وجہ سے غیر معمولی شہرت رکھتا ہے۔

مصر کے فوجی حکام نے اپنے ان فوجی ہیلی کاپٹروں کی طرف سے غزہ کی حدود کی خلاف ورزیوں کے بارے میں فوری طور پر کوئی بیان جاری نہیں کیا ہے۔

پہلے منتخب مصری صدر محمد مرسی کی تین جولائی سے برطرفی کے بعد سے مصری حکومت کے حماس کیساتھ تعلقات میں کشیدگی آ گئِی ہے۔ کیونکہ حماس کو اخوان المسلمون کا استعارہ سمجھا جاتا ہے۔

عبوری حکومت کے آنے کے بعد مصر کے ذرائع ابلاغ حماس کو تنقید کا نشانہ بناتے ہیں کہ حماس مصر کے اندرونی معاملات میں مداخلت کرتی ہے جبکہ حماس ان الزامات کی تردیدی کرتی ہے۔

مصر کی فوج نے صحرائے سینا کے علاقے میں وسیع پیمانے پر آپریشن شروع کر رکھا ہے۔ جس کا ایک مقصد غزہ کو زیر زمین سرنگوں کے نیٹ ورک کو نشانہ بنانا بتایا جاتا ہے۔

غزہ دینا کے گنجان ترین بستیوں میں شامل ہے جہاں 17 لاکھ فلسطینی باشندے رہائش پذیر ہیں۔ اس فلسطینی بستی پر اسرائیل بھی کئی مرتبہ فضائی حملے کر چکا ہے، تاہم یہ پہلا موقع ہے کہ اسرائیلی جہازوں اور ہیلی کاپٹروں اور جہازوں کی جارحانہ خلاف ورزیوں کے بعد مصر کے ہیلی کاپٹر بھی اس راستے پر پرواز کرنے آئے ہیں۔