.

شامی اخوان کا "وعد" کے نام سے سیاسی جماعت کی تشکیل کا فیصلہ

پارٹی کا صدر ڈاکٹر اور نائب صدر مسیحی برادری سے ہو گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام میں اہل سنت والجماعت کی معتدل مذہبی جماعت اخوان المسلمون نے"وعد پارٹی" کے نام سے سیاسی گروپ تشکیل دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ اخوان کی سیاسی جماعت کا باضابطہ اعلان آئندہ منگل 16 نومبرکو ترکی کے شہر استنبول میں کیا جائے گا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق شامی اخوان المسلمون مصر کی اخوان کے طریقہ کار کو سامنے رکھتے ہوئے ایک نئی سیاسی جماعت تشکیل دینے کا اعلان کرنے جا رہی ہے۔ اخوان کی نئی سیاسی جماعت کے نام اور اس کے منشور کے بارے میں ارکان جماعت کئی ہفتوں سے مذاکرات کر رہے تھے۔ بالآخرانہوں نے "نیشنل جسٹس اینڈ کانسٹیٹیوشن" پارٹی جس کا عربی میں مخفف "وعد" بنتا ہے کے نام پر تفاق کیا ہے۔

جماعت کے ایک مرکزی رہ نما علی صدر الدین البیانونی نے بتایا کہ نئی سیاسی جماعت کی صدارت کے لیے ماہر امراض چشم ڈاکٹر محمد ولید کا نام تجویز کیا گیا ہے جبکہ نائب صدر مسیحی برادری سے لیا جائے گا۔ جماعت کی نو رُکنی مجلس میں تین ارکان اخوان المسلمون، تین مذہبی گروپوں اور دیگر تین لبرل حلقوں سے لیے جائیں گے۔

"وعد" کے سیاسی منشور میں ملک میں پارلیمانی جمہوری نظام کی حمایت کی گئی ہے۔ اخوان رہ نما البیانونی کا کہنا ہے کہ سیاسی پارٹی شہری آزادی، آزادی اظہار رائے اور جمہوریت کے اصولوں پر قائم کی گئی ہے اور جماعت کے تمام ارکان کو ان اصولوں پر کاربند رہنا ہو گا۔