.

مصر: صحافیوں کیلیے بھاری وقت، تین کو سزا دو پر مقدمہ

المصری الیوم سے وابستہ دو صحافیوں پر جج کو بدنام کرنے کا الزام عاید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر میں دو صحافیوں کو عدالت کو بدنام کرنے کے الزام کے تحت مقدمے کا سامنا ہے ۔ ان صحافیوں پر الزام عاید کیا گیا ہے کہ انہوں نے 2012 میں ایک ایسا مضمون شائع کیا تھا جس میں جج کی شہرت کو نقصان پہنچا تھا۔

مصر کے مشہور اخبار '' المصری الیوم ''کے سابق مینجنگ ایڈیٹر ما جدی الجیلاد اور اخبار کے رپورٹر محمد سنحوری کے خلاف ججوں کے با اثر کلب کی طرف سے درخواست دائر کی گئی ہے تاکہ ان پر مقدمہ چلایا جائَے۔

تفصیلات کے مطابق جنوری 2012 میں جب ہشام الجنیما قاہرہ میں کورٹ آف اپیل کے سربراہ تھے ایک مضمون میں انگلی اٹھائی گئی تھی کہ ''انتخابی شفافیت کا معاملہ پتلا ہے ۔ '' اس مضمون کا اب نوٹس لیا گیا ہے۔ اس سلسلے میں ان صحافی حضرات کے خلاف مقدمے کی ابھی تاریخ طے نہیں کی گئی ہے۔

اکتوبر میں تین مصری صحافیوں کو پہلے ہی فوجی عدالتوں سے سزا سنائی جا چکی ہے ۔ ان میں سے دوصحافیوں کو چھے ماہ جبکہ ایک کو ایک سال کی سزا سنائِی گئی ہے۔

واضح رہے ان دنوں عبوری صدر کی طرف سے ْقائم کردہ کمیٹی ایک نئے دستور کی تیاری میں مصروف ہے جس نے ابتدائی طور پر اس آرٹیکل کی منظوری دی ہے کہ صحافی کو اس کی رپورٹس کے حوالے سے جیل نہیں بھیجا جائے گا۔ اس نئے دستور کو اگلے ماہ دسمبر میں ایک ریفرنڈم کے ذریعے منظور کیے جانے کا امکان ہے ۔ کیونکہ اس سے پہلے والے دستور کو محمد مرسی کی فوج کے ہاتھوں برطرفی کے موقع پر معطل کر دیا گیا تھا۔