.

یو اے ای میں اخوانی قیدیوں کے ٹرائل پرمبنی دستاویزی فلم تیار

فلم آج نمائش کےلیے دبئی میں پیش کی جائے گی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

متحدہ عرب امارات نے ملک میں اخوان المسلمون کے ایک خفیہ گروپ کی سرگرمیوں کے بعد انہیں عدالت میں پیش کیے جانے سے متعلق ایک دستاویزی فلم تیار کی ہے جسے آج ابوظہبی میں نمائش کے لیے میں پیش کیا جائے گا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ" کے مطابق "روڈ ٹو 2 جولائی" کے عنوان سے تیار کردہ اس فلم میں اخوانی کارکنوں کے ٹرائل کے مناظر کو خاص طور پر پیش کیا گیا ہے۔ فلم میں بتایا گیا ہے کہ اندرون اور بیرون ملک سے تعلق رکھنے والے اخوانی کارکن کس طرح اپنے مقاصد کے لیے خفیہ سرگرمیوں میں مصروف عمل تھے۔

خیال رہے کہ متحدہ عرب امارات نے رواں سال جولائی میں اخوان المسلمون کے ایک خفیہ سیل کا پتا چلاتے ہوئے کئی افراد کو حراست میں لیا تھا۔ حکام کا کہنا تھا کہ 20 مصری اور 10 مقامی اخوانی کارکن متحدہ عرب امارات میں اپنی مشکوک اور خفیہ سرگرمیوں میں ملوث پائے گئے ہیں۔ ان میں سے چھ ملک سے فرار میں کامیاب ہوگئے تھے جبکہ دیگرچوبیس کو حال ہی میں ابوظہبی کی ایک فوجداری عدالت میں پیش کیا گیا۔

"یو اے ای" پراسیکیوٹرجنرل کی تحقیقات میں بتایا گیا ہے کہ اندرون اور بیرون ملک سے آئے اخوانی عناصر جنگی جرائم کے مرتکب قرار پائے ہیں۔ ملزمان کے قبضے سے اہم تنصیبات کے نقشے اور دستاویزات بھی ملی ہیں جن سے اندازہ ہوتا ہے کہ وہ ملک میں افراتفری پھیلانے کی منصوبہ بندی کر رہے تھے۔ اس کےعلاوہ ملزمان پرغیر قانونی تنظیم قائم کرنے، غیرملکیوں کو پناہ دینے کے الزامات بھی عائد کیے گئے ہیں۔