عراق:مسلح افراد کے حملے میں 18 مزدور ہلاک

بلدروز کے نزدیک حملے میں مرنے والوں میں 15 ایرانی اور 3 عراقی ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

عراق کے شمال مشرقی شہر بلدروز کے نزدیک مسلح افراد نے فائرنگ کر کے ایران سے عراق تک گیس پائپ لائن بچھانے کے منصوبے پر کام کرنے والے اٹھارہ ورکروں کو ہلاک کردیا ہے۔

عراقی حکام نے بتایا ہے کہ مرنے والوں میں پندرہ ایرانی اور تین عراقی ہیں اور پانچ ایرانی اور دوایرانی ورکر زخمی ہوگئے ہیں۔فوری طور پر کسی گروپ نے اس حملے کی ذمے داری قبول نہیں کی۔

عراق میں ایک مرتبہ پھر فرقہ وارانہ بنیاد پر تشدد کے واقعات اور ہلاکتوں میں اضافہ ہوگیا ہے اور اس سال اب تک 6500 سے زیادہ افراد تشدد کے واقعات میں مارے جاچکے ہیں۔یہ 2008ء کے بعد ایک سال میں سب سے زیادہ ہلاکتیں ہیں۔دسمبر کے پہلے آٹھ روز میں تشدد کے واقعات میں جتنے افراد مارے گئے ہیں،اتنے دسمبر 2012ء کے پورے مہینے میں مارے گئے تھے۔تجزیہ کار اس صورت حال کے پیش نظر ملک میں ایک مرتبہ پھر مکمل خانہ جنگی چھڑنے کے خدشے کا اظہار کررہے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں