.

الابنار صوبے میں القاعدہ کے خلاف آپریشن میں عراقی جنرل ہلاک

کارروائی میں پانچ فوجیوں سمیت پندرہ دیگر افراد بھی مارے گئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عراق کے سنی اکثریتی علاقے میں ہفتے کے روز چھاپہ مار کارروائی کے دوران پندرہ فوجی افسروں کی ہلاکت کے بعد فوج کو چوکس رہنے کی ہدایت کر دی گئی ہے۔ العربیہ ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق حملے میں ایک میجر جنرل سمیت پانچ فوجی افسر مارے گئے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ عراقی فوج کے میجر جنرل محمد الخوری اور چودہ دوسرے اہلکار شامی سرحد کے قریب عراق کے سنی اکثریتی صوبے الانبار میں القاعدہ کے ایک ٹھکانے پر حملے کے دوران ہلاک ہوئے۔

العربیہ کے نامہ نگار نے بتایا ہے کہ وزیر اعظم نوری المالکی نے شام اور عراق میں سرگرم القاعدہ کے مسلح جنگجووں کی تلاش کے لئے فوج کو صوبے میں آپریشن کا حکم دیا ہے۔

نامہ نگار کے مطابق ہفتہ کے روز ہونے والی کارروائی میں 35 افراد زخمی ہوئے۔ صلاح الدین گورنری کے شرقات علاقے میں واقعے کے بعد کرفیو لگا دیا گیا ہے۔