حزب اللہ معصوم لوگوں کا خون بہا رہی ہے: بحرینی وزیرخارجہ

"رفیق حریری کے قاتل ہی محمد شطح کے قتل میں ملوث ہیں"

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

بحرین کے وزیرخارجہ الشیخ خالد بن احمد آل خلیفہ نے کہا ہے کہ لبنانی شیعہ ملیشیا حزب اللہ معصوم شہریوں کا قتل عام کر رہی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ جن عناصر نے سابق وزیراعظم رفیق حریری کی جان لی تھی وہی سابق وزیر محمد شطح کے قتل میں بھی ملوث ہیں۔

سماجی رابطےکی ویب سائٹ "ٹیوٹر" پر اپنے ایک بیان میں بحرینی وزیرخارجہ کا کہنا ہے کہ حزب اللہ ایک دہشت گرد گروپ ہے، جو اپنے سیاسی افلاس کو معصوم لوگوں کے قتل عام سے ختم کرنے کی کوشش کر رہا ہے۔ حزب اللہ کے لیے یہ کوئی انوکھی بات نہیں کہ وہ خود کو ماروائے قانون قرار دیتی ہے۔ یہ ایسے لوگوں کی تنظیم ہے جو دن دیہاڑے معصوم لوگوں کو قتل کر کے مکر جاتی ہے۔

بحرینی وزیرخارجہ کا کہنا تھا کہ حزب اللہ لبنان میں کئی اہم شخصیات کو موت کے گھاٹ اتارنے میں براہ راست ملوث ہے۔ سابق وزیراعظم رفیق حریری کے قتل کے بعد ان کی مقرب کئی اہم شخصیات کو مارنے میں حزب اللہ کا ہاتھ ہے۔ سابق وزیرمالیات محمد شطح اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے۔

بحرینی وزیرخارجہ نے یہ بیان حزب اللہ کی جانب سے جاری اس بیان کے جواب میں دیا ہے جس میں بحرین کے شیعہ رہ نما الشیخ علی سلمان کے ایک متنازعہ خطبہ جمعہ کی تحقیقات اوراشتعال پھیلانے کے الزامات کی تحقیقات کی مخالفت کرتے ہوئے منامہ حکومت کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا تھا۔ بحرین نے حکومت نے شیخ علی سلمان کو ان کے متنازعہ بیانات اور تقاریر کے بعد بیرون ملک سفرسے بھی روک دیا ہے۔ ان پرایک خطبہ جمعہ میں اشتعال پھیلانے اور حکومت کے خلاف اکسانے جیسے الزامات عائد کیے گئے ہیں۔

یاد رہے کہ لبنان کے ایک سابق وزیر اور سابق وزیراعظم سعد حریری کے دست راست محمد شطح گذشتہ ہفتے بیروت میں ایک کار بم دھماکے میں مارے گئے تھے۔ سعد حریری کی جماعت "مارچ 14" نے الزام عائد کیا ہے کہ جو عناصر رفیق حریری کے قتل میں ملوث ہیں، وہی محمد شطح کی جان لینے کے بھی ذمہ دار ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں