.

سعودی طبی ریکارڈ، چار ماہ میں 320 کلو کم کرنے میں کامیاب

خالد محسن کا پہلے وزن 610 کلو تھا اور تین بیڈز پر سوتا تھا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایسا بہت کم ہوتا ہے کہ غیر معمولی موٹاپے کا شکار شخص وہ اس عارضے سے تیزی نے نجات پانے کی راہ پر آجائے۔ مگر سعودی شہری خالد محسن اس حوالے سے کامیاب رہا ہے جس نے صرف چار ماہ کے دوران 320 کلو گرام وزن کر لیا ہے۔

جزان کے رہائشی خالد محسن نے مختصر مدت میں 320 کلو وزن کم کر کے ایک عالمی ریکارڈ قائم کر دیا ہے۔ ٹھیک چار ماہ پہلے اس کا وزن چھ سو دس کلو گرام تھا۔ اسے یہ کامیابی شاہ فہد میڈیکل سٹی ریاض میں داخل رہنے کے بعد ملی ہے۔

خالد محسن کو جزان سے اس کےغیر معمولی موٹاپے کے باعث ہیلی کاپٹر پر ریاض کے اس جدید ترین ہسپتال لایا گیا تھا۔ اس کا علاج کرنے والے ڈاکٹر عاید القہتانی کے مطابق جاری علاج اب اگلے مرحلے میں پہنچ گیا ہے اور موٹے سعودی کا دل اور پھپھڑے درست انداز میں کام کر رہے ہیں۔

ڈاکٹر قہتانی کے مطابق خالد محسن کے موٹاپے میں کمی کیلیے لیپروسکوپی سرجری کی جا رہی ہے۔ ڈاکٹروں کی ٹیم پیش رفت سے مطمئن ہے۔ حتی کہ اعصاب کی مضبوطی اور سرگرمی میں بھی فعالیت آئی ہے۔

ڈاکٹروں کے مطابق یہ طبی شعبے کا عالمی ریکارڈ ہےکہ اس قدر تیزی سے موٹاپے سے نجات ممکن ہوئی ہے۔ ہسپتال نے اس کی دیکھ بھال اور علاج کیلیے 21 کنسلٹنٹ اور 15 نرسیں تعینات کی ہیں۔ پہلے تین ماہ کے دوران 150 کلو وزن کم ہوا جبکہ چوتھے ماہ میں مزید 170 کلو وزن کم ہو گیا۔

اس عظیم الجثہ مریض کے بہتر ہونے کی ایک دلیل یہ ہے کہ پہے اسے سونے کیلیے تین بیڈز کے برابر بیڈ کی ضرورت ہوتی تھی لیکن اب صرف ایک بیڈ پر پورا آجاتا ہے۔