فوجی کیمپ پر عسکریت پسندوں کا حملہ، 15 ہلاک

فوجی کیمپ ایک تیل پائپ لائن کی حفاظت کیلیے قائم تھا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

عراقی فوج کے ایک کیمپ پر حملے کے دوران 15 فوجی ہلاک ہو گئے ہیں۔ یہ فوجی کیمپ شاملی عراق میں تیل کی ایک پائپ لائن کی حفاظت کیلیے قائم کیا گیا تھا۔ عراق میں فوجی حکام اور عسکریت پسندوں کے درمیان لڑائی اور جھڑپیں روز کا معمول ہیں۔

عسکریت پسندوں نے صوبہ نینوا میں منگل کے روز ایک فوجی کیمپ میں داخل ہو کر کیمپ میں موجود 15 فوجیوں کو ہلاک کیا اور اس کے بعد موقع سے فرار ہو گئے۔ مقامی پولیس حکام نے بھی حملہ آوروں کے کامیابی سے فرار ہو جانے کی تصدیق کی ہے۔

مقامی حکام کے مطابق فوجی کیمپ اس طرح کی کارروائیوں کا اکثر نشانہ بنتے رہتے ہیں۔ یہ واقعہ ٹارگیٹ کلنگ کا ہے کہ صرف فوجیوں کو نشانہ بنایا گیا ہے۔

دو روز قبل اسی نوعیت کا ایک واقعہ تز خرموطو میں بھی پیش آیا تھا جس میں پولیس اہلکار ہلاک ہو گئے تھے۔ اس وقعے میں پولیس اہلکاروں کو جبری طور پر اپنے سامنے نماز پڑھنے کیلیے کہا گیا تاکہ اندازہ کیا جا سکے کہ پولیس اہلکار شیعہ فرقے سے تعلق رکھتے ہیں۔

واضح رہے صرف پچھلے ماہ جنوری کے دوران عراق میں ایک ہزار افراد بدامنی کے ایسے واقعات کی نذر ہو چکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں