.

حماس کے سابق ترجمان کیخلاف بے قاعدگیوں کی تحقیقات شروع

ایمن طہ پچھلے دو ہفتوں سے لا پتہ ہیں، بھائی کیطرف سے مذمت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

غزہ کی حکمران جماعت حماس کے سابق ترجمان ایمن طہ کو مبینہ طور پر بعض بے قاعدگیوں کی وجہ سے اپنی جماعت کی طرف سے تحقیقات کا سامنا ہے۔ عالمی خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق یہ بات حماس کے سینئیر رہنما احمد بحر نے بتائی ہے۔

تاہم انہوں نے یہ نہیں بتایا کہ سابق ترجمان حماس کو کن متعین الزامات کا سامنا ہے۔ حماس رہنما کے مطابق ایمن طہ کے پورے احترام کے ساتھ بعض بے قاعدگیوں کا بھائی جائزہ لے رہے ہیں۔ ''

تاہم حماس رہنما احمد بحر نے واضح کیا اگر بے قاعدگیاں ثابت ہو گئیں تو کسی بھی دوسرے عام آدمی کی طرح ایمن طہ کا احتساب کیا جائے گا۔

اس دوران ایمن طہ کے بھائی حسان محمد کی جانب سے میڈیا کو جاری کیے گئے ایک ویڈیو پیغام میں سابق ترجمان کے خلاف تحقیقات کی افواہوں اور الزامات کی مذمت کی گئی ہے۔

حسان محمد نے کہا ''شاید ان کے بھائی سے غلطی ہوئی ہو لیکن ایسا کچھ نہیں کیا ہو گا کہ ان کے خلاف افواہیں پھیلائی جائیں۔'' تاہم انہوں نے یہ واضح نہیں کیا کہ ان کے بھائی کو حراست میں لیا گیا ہے یا نہیں۔

بعض دیگر فلسطینی ذرائع کا کہنا ہے کہ ایمن طہ گزشتہ دو ہفتوں سے سے لا پتہ ہیں، البتہ حماس نے اس بارے میں کسی الزام کی تصدیق ہے۔