.

دہشت گردی کے الزام میں ایک پاکستانی سمیت پانچ سعودی باشندوں کو قید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی ایک خصوصی فوجداری عدالت نے پانچ مقامی اور ایک پاکستانی باشندے کو 10 ماہ سے 22 سال تک مختلف مدت کی قید کی سزائیں سنائی ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق آٹھ افراد کے ایک گروپ کو عدالت میں پیش کیا گیا۔ اس موقع پر دو ملزمان کو بری کردیا گیا جبکہ دیگر چھ کو دہشت گرد گروپوں کے ساتھ تعلقات، تکفیری نظریات کے فروغ، ولی الامر کے خلاف بغاوت، اہم شخصیات کے قتل کی منصوبہ بندی، شہریوں کو جہاد کے نام پرعسکریت پسندی پر مائل کرنے، غیر قانونی اسلحہ رکھنے، قانون ہاتھ میں لینے اور فساد فی الارض کے الزامات ثابت ہونے پر قید کی سزائیں سنائی گئیں۔

کچھ ملزمان پر جعلی پاسپورٹ اور شناختی کارڈ رکھنے کے علاوہ القاعدہ کے عسکری کیمپوں میں تربیت حاصل کرنے، دھماکہ خیز مواد تیار کرنے کی ٹریننگ، خود کش حملوں کی منصوبہ بندی اور جیل میں اسلحہ لے جانے اور وہاں سے فرار ہونے کے الزامات بھی عائد کیے گئے ہیں۔