.

حلب: فوج کیلیے مختص ہوٹل پر حملہ، بڑا حصہ تباہ

سکیورٹی فورسز کا علاقے کا محاصرہ، ریسکیو کارروائی شروع

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

دمشق میں شامی فوج کا مسکن بننے والے حلب کے ایک اہم ہوٹل پر باغیوں نے زبردست حملہ کر کے مبینہ طور پر متعدد فوجیوں کو ہلاک یا زخمی کر دیا ہے۔ تاہم فوری طور پر مجموعی اور حتمی نقصان کا اندازہ لگانا مشکل ہے۔

سکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے کر ریسکیو آپریشن شروع کر دیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق ہوٹل کی عمارت کو بھی کافی نقصان پہنچا ہے اور ریسکیو ٹیموں نے گرنے والے حصے کا ملبہ ہٹا کر زخمیوں کو نکالنا شروع کر دیا ہے۔

واضح رہے حمص میں شامی فوج اور باغیوں کے درمیان ایک معاہدے کے تحت جزوی فائر بندی ہو گئی ہے اور باغیوں کے حمص سے انخلاء کاعمل جاری ہے جبکہ حلب میں جمعرات کے روز ہونے والی کارروائی ایک اہم واقعہ ہے۔

فوری طور پر دستیاب اطلاعات کے مطابق کارلٹن ہوٹل کو ڈیٹو نیٹر لگا کر تباہ کرنے کی کوشش کی گئی ہے۔ برطانیہ میں قائم ایک آبزرویٹری کا کہنا ہے کہ ہوٹل پر کی گئی کارروائی سے غیر معمولی نقصان کا تخمینہ ہے، تاہم فوری طور پر اس بارے میں مصدقہ اطلاعات دستیاب نہیں ہو سکی ہیں ۔