بغداد: مسجد میں خودکش بم حملہ،19 افراد ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

عراق کے دارالحکومت بغداد کے وسطی علاقے میں واقع اہل تشیع کی ایک مسجد میں خودکش بم دھماکے کے نتیجے میں انیس افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے ہیں۔

پولیس ذرائع کے مطابق بغداد کے علاقے شرجا میں بم دھماکا ہوا ہے۔اس کے نتیجے میں مسجد کی دیواریں دھویں سے سیاہ ہوگئیں اور فرش ،دیواروں اور چھت پر مرنے والوں کے خون کے لوتھڑے لگے ہوئے تھے''۔

قبل ازیں عراق کے سکیورٹی ذرائع نے کہا تھا کہ مسجد کے نزدیک واقع ایک بس اسٹیشن میں کھلی جگہ پر دھماکا ہوا ہے لیکن بعد میں انھوں نے مسجد کے اندر دھماکے کی تصدیق کی ہے۔مرنے والوں اور زخمیوں میں زیادہ ترعلاقے کے دکان دار اور کاروباری افراد ہیں جو مسجد میں نماز ادا کرنے کے لیے گئے تھے۔اسپتال ذرائع کا کہنا ہے کہ بعض زخمیوں کی حالت تشویش ناک ہے جس کے پیش نظر ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے۔

فوری طور پر کسی گروپ نے اس خودکش بم حملے کی ذمے داری قبول نہیں کی ہے لیکن قبل ازیں القاعدہ سے وابستہ جنگجو تنظیم دولت اسلامی عراق و شام (داعش) پر اس طرح کے حملوں کے الزامات عاید کیے جاتے رہے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں