.

شامی کیمیائی ہتھیاروں کی آخری کھیپ تلفی کے لیے روانہ

چک ہیگل کی طرف سے ڈنمارک اور اٹلی کے تعاون کا شکریہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام کے کیمیائی ہتھیاروں کی اٹلی کی بندرگاہ پر ڈنمارک کے کنٹینرز سے امریکی بحری کشتی میں منتقلی کا کام مکمل کر لیا گیا ہے۔ اس امر کی تصدیق پینٹاگان نے کر دی ہے۔

شامی کیمیائی ہتھیاروں کے خاتمے کا فیصلہ دمشق کی نواحی آبادی الغوطہ میں کیمیائی ہتھیاروں سے 1400 افراد کی ہلاکت کے بعد امریکا اور روس کے درمیان طے پانے والے معاہدے کے بعد سلامتی کونسل نے کیا تھا۔

پینٹا گان کے پریس سیکرٹری رئیر ایڈمرل جان کربی کے مطابق ڈنمارک کے کنٹینر شپ سے بحری کشتی پر کیمیائی اسلحے کی منتقلی مکمل کر لی گئی ہے۔

امریکی کیپ رے نامی کشتی ان ہتھیاروں کو لے کر اٹلی کی بندرگاہ سے بین الاقوامی پانیوں کی طرف روانہ ہو گئی ہے۔ جہاں ان کی تلفی مکمل کر دی جائے گی۔ تاہم پینٹاگان کے ترجمان کے مطابق '' تلفی کے اس عمل میں کئی ہفتے لگ سکتے ہیں۔''

امریکی وزیر دفاع چک ہیگل نے اس اہم مرحلے کی تکمیل پر ڈنمارک اور اٹلی کے حکام کا شکریہ ادا کیا ہے، کہ ان ممالک نے کیمیائی ہتھیاروں کی تلفی میں پورا ساتھ دیا اور کسی حادثے کے بغیر اپنا سارا کام مکمل کیا ہے۔