'جہادیوں کی خلافت' شریعت کے خلاف ہے: قرضاوی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

قطر میں مقیم ممتاز مصری عالم دین نے کہا ہے کہ دولت اسلامی عراق و شام کے عسکریت پسندوں کی جانب سے 'اسلامی خلافت' کا اعلان اسلامی شریعت کی خلاف ورزی ہے۔

داعش نے اتوار کوعراق اور شام میں اپنے زیر نگیں علاقوں میں خلافت کے قیام کا اعلان کیا تھا اور کہا تھا کہ اس کی شوریٰ کونسل نے اپنے سربراہ ابو بکر البغدادی کو خلیفہ مقرر کیا تھا اور کہا تھا کہ وہ دنیا بھر کے مسلمانوں کے امیرالمومنین ہوں گے۔

اپنے آبائی ملک مصر میں اخوان المسلمون کے روحانی رہبر کے طور پر مشہور شیخ قرضاوی نے ایک بیان میں داعش کے اعلان 'خلافت اسلامیہ' کو شریعت کی روشنی میں باطل قرار دے دیا۔

عراق اور شام میں برسرپیکار سخت گیر جہادی گروپ کے سربراہ نے دنیا بھر سے تعلق رکھنے والے انتظامی ، طبی اور عسکری صلاحیت کے حامل مسلمانوں کو اپنی نئی اعلان کردہ اسلامی ریاست میں آنے اور اپنے گروپ میں شمولیت کی دعوت دی ہے۔

دولت اسلامی عراق وشام (داعش) کے سربراہ اور از خود اعلان کردہ خلیفۃ المسلمین ابوبکر البغدادی نے منگل کو آن لائن جاری کردہ ایک آڈیو ریکارڈنگ میں کہا ہے کہ ''جو لوگ اسلامی ریاست کی جانب ہجرت کر سکتے ہیں تو وہ ایسا کریں کیونکہ دارالسلام کی جانب نقل مکانی ان پر فرض ہے''۔

داعش کے خلیفہ نے کہا ہے کہ ان کی اس اپیل کا خاص طور پر ججوں ،عسکری ،فوجی اور انتظامی صلاحیت کے حامل افراد ،ڈاکٹروں اور انجینیروں پر اطلاق ہوتا ہے''۔انھوں نے اپنے گروپ کے جنگجوؤں سے کہا ہے کہ ''دنیا بھر میں آپ کے بھائی منتظر ہیں کہ ان کو بچایا جائے''۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں