.

دو دھماکے، مصری سکیورٹی افسر سمیت آٹھ ہلاک، 25 زخمی

کرمشل مارکیٹ اور سکیورٹی یونٹ ہدف تھے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کے ایک سکیورٹی افسر کے علاوہ سات شہری دو الگ الگ دھماکوں میں ہلاک ہو گئے ہیں۔ یہ دونوں دھماکے مختصر وقفے کے ساتھ مصری علاقے سیناء میں ہوئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق مصری سکیورٹی حکام نے اتوار اور پیر کی درمیانی شب کو سیناء کے علاقے میں دو دھماکوں کی تصدیق کی ہے۔ وزارت داخلہ کے حکام کا کہنا ہے کہ یہ دھماکے اسلامی عسکریت پسندوں نے کیے ہیں۔

واضح رہے سیناء کا علاقہ پچھلے کچھ عرصے سے عسکریت پسندوں کی سرگرمیوں کا مرکز بنا ہوا ہے۔ خصوصا پہلے منتخب مصری صدر محمد مرسی کا تختہ الٹے جانے کے بعد سیناء میں عسکریت پسندوں کی سرگرمیاں تیز ہو گئی ہیں۔

اب تک عسکریت پسندوں کی کارروائیوں کے نتیجے میں سینکڑوں سکیورٹی اہلکار ہلاک ہو چکے ہیں۔ تازہ دھماکوں میں آٹھ افراد ہلاک ہونے کے علاوہ 25 افراد زخمی بھی ہو گئے ہیں۔

سکیورٹی فورسز کے مطابق عسکریت پسندوں کی طرف سے استعمال کیے گئے راکٹوں کا ہدف سیناء کے شہر العریش میں ایک سکیورٹی کمپاونڈ کے ساتھ ملحق مارکیٹ تھی۔

کچھ دیر بعد العریش میں ہی دو مزید راکٹوں نے ایک سکیورٹی یونٹ کو بھی نشانہ بنایا۔ جس سے ایک سکیورٹی افسر بھی ہلاک ہو گیا اور متعدد اہلکار زخمی ہو گئے۔