.

بحرینی فرمانروا کی شاہ عبداللہ سے ملاقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

خلیجی ریاست بحرین کے فرمانروا شاہ حمد بن عیسیٰ آل خلیفہ نے اپنے دورہ سعودی عرب کے دوران سعودی فرمانروا شاہ عبداللہ بن عبدالعزیز سے ملاقات کی۔ ملاقات میں عالم اسلام، عرب ممالک اور عالمی سطح کے اہم معاملات پر بات چیت کی گئی اور باہمی دلچسپی کے امور پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔

دونوں رہ نماؤں کے درمیان ہونے والی گفتگو میں خلیجی ممالک کا خطے میں جاری مشترکہ ترقی کا عمل بھی زیربحث آیا۔ دونوں سربراہان مملکت نے ایک دوسرے کے مفادات کو سامنے رکھتے ہوئے خلیج کی تعمیرو ترقی کے لیے مثبت کردار ادا کرنے پر اتفاق کیا۔

بحرین کی سرکاری خبر رساں ایجنسی"بنا" کی رپورٹ کے مطابق سعودی فرمانروا شاہ عبداللہ نے اپنے بحرینی ہم منصب سے بات چیت کرتے ہوئے بحرین۔سعودی عرب کے دوسرے رابطہ پل کے منصوبے پر اُنہیں مبارک باد بھی پیش کی۔

خیال رہے کہ دونوں ملکوں کے درمیان "شاہ حمد بریج" کا منصوبہ سعودی عرب کی خواہش پر شروع کیا گیا ہے۔ اس کا باضابطہ افتتاح جلد ہو جائے گا۔ پل کی تعمیر کے بعد شمالی بحرین اور سعودی عرب باہم مربوط ہو جائیں گے۔ پل کی تکمیل سے نہ صرف دونوں پڑوسی خلیجی ملکوں کو فائدہ ہو گا بلکہ خطے کے دیگر ممالک کا سعودی عرب سے فاصلہ کم ہو جائے گا اور وہ بحرین کے راستے سعودی عرب جا سکیں گے۔

بحرینی فرمانروا نے پل کی تعمیر کے منصوبے پر شاہ عبداللہ بن عبدالعزیز اور ان کی حکومت کی مساعی کا شکریہ ادا کیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ ‌کے مطابق بحرینی فرمانروا ہفتے کے شام کو جدہ ہوائی اڈے پہنچے تھے جہاں سعودی ولی عہد شہزادہ سلمان بن عبدالعزیز نے ہوائی اڈے پر ان کا استقبال کیا تھا۔