.

33 کویتی ریاستی شہریت سے محروم: ایچ آر ڈبلیو

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

نیویارک میں قائم انسانی حقوق کی عالمی تنظیم ہیومن رائٹس واچ (ایچ آر ڈبلیو) نے اطلاع دی ہے کہ کویت نے اس سال کے دوران تینتس افراد کو ملکی شہریت سے محروم کردیا ہے۔ ان میں سے تین حکومت کے سخت ناقدین بھی شامل ہیں۔

ہیومن رائٹس واچ کے مطابق کویت نے 29 ستمبر کو تیسرے مرحلے میں اٹھارہ افراد کی شہریت منسوخ کرنے کا اعلان کیا تھا۔ تنظیم نے کویتی حکام پر زوردیا ہے کہ جن افراد کو شہریت سے محروم کیا جارہا ہے، انھیں اس فیصلے کے خلاف آزادانہ نظر ثانی کی اپیل کا حق دیا جائے۔

واضح رہے کہ ان میں سے بہت سے کیسوں میں کویتی کابینہ نے حکومت کے مخالف افراد کی شہریت منسوخ کرنے کا فیصلہ کیا ہے اوراس نے ایسا کسی عدالتی حکم کے تحت نہیں کیا ہے۔

جن نمایاں شخصیات کو کویت کی شہریت سے محروم کیا گیا ہے،ان میں آزاد ٹیلی ویژن چینل الیوم اوراخبار العلام الیوم کے مالک احمدالشمرائی ،قدامت پسند عالم دین نبیل العوادی اور سرکردہ اپوزیشن لیڈر مسلم البراک کے ترجمان سعد العجمی بھی شامل ہیں۔یہ تینوں کویتی حکومت کے سخت ناقدین میں شمار ہوتے تھے۔