.

شام: پناہ گزینوں پر بمباری، امریکا کیطرف سے مذمت

اسد رجیم کی بمباری نے ہمیں خوفزدہ کر دیا ہے: جین پاسکی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام کی اسد رجیم کی طرف سے ادلب میں پناہ گزینوں کے کیمپ پر کی جانے والی بمباری کو امریکا نے خوفناک قرار دیا ہے۔ امریکا نے اس حالیہ بمباری سے متعلق رپورٹس اور تصاویر سامنے آنے پر اسے اسد رجیم کی بربریت کا نام دیا ہے۔

امریکی دفتر خارجہ کی ترجمان جین پاسکی نے کہا '' ہم اسد رجیم کی ادلب میں پناہ گزینوں کے کیمپ پر بمباری کے حوالے سے سامنے آنے والی رپورٹس کو دیکھ کر خوفزدہ ہو گئے ہیں۔''

واضح رہے حبیت نامی کیمپ پراس بمباری میں کم از کم دس شامی پناہ گزین ہلاک اور متعدد زخمی ہو گئے ہیں۔

اس سلسلے میں سوشل میڈیا پر آنے والی تصاویر میں دیکھا جا سکتا ہے کہ انسانی لاشوں کے چیتھڑے درختوں کی شاخوں میں الجھے ہوئے ہیں۔ شام ان دنوں دو طرح کی بمباری کی زد میں ہے۔

جین پاسکی نے کہا '' حقیقت یہ ہے کہ اسد رجیم کے جنگی طیاروں کی یہ بمباری سوائے بربریت کے کچھ نہ تھی۔ '' تاہم انہوں نے کہا '' امریکا اس حملے کی تفصیلات کی تصدیق نہیں کر سکتا، یہ اسد رجیم کا اپنے شہریوں کے خلاف تازہ ترین حملہ ہے۔''

امریکی ترجمان نے کہا '' ہم اسد رجیم کے ان بے رحمانہ اور وحشیانہ حملوں کی مسلسل مذمت کرتے آئے ہیں، کہ اسد رجیم بطور خاص عام لوگوں کو نشانہ بناتی ہے۔'' ترجمان کا مزید کہنا تھا '' اسد رجیم کو اس کے شامی عوام پر مظالم کا ذمہ دار قرار دیا جانا چاہیے۔''