.

نیوکلیئر معاملے پر امریکی، ایرانی حکام کی ملاقاتیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایران کی سرکاری نیوز ایجنسی 'ایرنا' کے مطابق ایرانی جوہری ایجنسی کے سربراہ علی اکبر صالحی تہران کے نیوکلیئر پروگرام پر مذاکرات کے سلسلے کے میں امریکی وزیر توانائی ایرنسٹ مونز سے جنیوا میں ملاقات کریں گے۔

ایران اور چھ عالمی طاقتوں کے مذاکرات کار گذشتہ برس نومبر میں کسی ایسے معاہدے پر اتفاق کرنے میں ناکام رہے تھے جس کے بموجب ایران کا جوہری پروگرام روک کر کے اس کے عوض تہران پر عائد معاشی پابندیاں اٹھائی جا سکیں۔

برطانوی خبر رساں ایجنسی 'رائیٹرز' کے مطابق یورپی یونین کی بیرونی ایکشن سروس نے ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ ایران، برطانیہ، امریکا، روس، چین، فرانس اور جرمنی کے نمائندوں پر مشتمل باڈی 22 فروری کو جنیوا میں مذاکرات کا ایک دور منعقد کریں گے تاکہ ایران کے جوہری پروگرام سے متعلق خدشات کا کوئی حل نکالا جا سکے۔

بیان میں بتایا گیا تھا "اس میٹنگ سے پہلے ایران اور امریکا کے درمیان باہمی اجلاس کا اہتمام کیا جائے گا جس میں پورپی یونین کی بیرونی ایکشن سروس کی پولیٹکل ڈائریکٹر ہیلگا شمت بھی شرکت کریں گی۔"