.

غرب اردن: اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے فلسطینی جاں بحق

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

فلسطینی میڈیکل ذرائع کا کہنا ہے کہ مغربی کنارے کے شہر بیت لحم میں ایک فلسطینی مہاجر کیمپ میں اسرائیلی فوج سے ہونے والی جھڑپوں میں ایک انیس سالہ فلسطینی نوجوان جاں بحق ہو گیا۔

ذرائع کے مطابق مرنے والے نوجوان جہاد الجعفری کا تعلق فلسطینی صدر محمود عباس کی جماعت 'الفتح' سے تھا اور وہ گذشتہ شب بیت لحم کے دھیشہ کیمپ میں ہونے والی کشیدگی میں جان سے ہاتھ دھو بیٹھا۔

اسرائیلی فوج کے ترجمان نے بتایا کہ کیمپ میں ان کے فوجیوں پر مظاہرین نے پتھراو کیا اور مختلف اشیاء ان پر پھینکیں۔ اس کارروائی میں ایک اسرائیلی فوجی بھی زخمی ہوا۔

ترجمان نے مزید کہا کہ مظاہرین کو منتشر کرنے میں ناکامی پر اسرائیلی فوج نے خود کو خطرے میں محسوس کیا جس کے بعد احتجاجی مظاہرے کی قیادت کرنے والے پر فلسطینی پر فائر کیا گیا، جس سے وہ زخمی ہوا اور بعد ازاں انتقال کر گیا۔