.

یو این وفد کی جنگ بندی منصوبے پر گورنر حلب سے ملاقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام میں موجود اقوام متحدہ کے وفد نے حلب میں جاری لڑائی کو رکوانے کی خاطر حلب کے گورنر سے ملاقات کی ہے۔ اقوام متحدہ کے سفیر سٹافن ڈی مستورا کے مطابق حلب میں جنگ بندی کے منصوبے کو شام میں جاری تباہ کن سول جنگ کو روکنے کی کوششوں میں مرکزی اہمیت حاصل ہے۔

اقوام متحدہ کے سفیر نے اس سلسلے میں حکومتی عہدیداروں اور اپوزیشن رہنمائوں سے ملاقاتیں کی ہیں تاکہ یہ منصوبہ مکمل کیا جاسکے مگر ابھی تک اس معاملے میں کوئی پیش رفت دیکھنے میں نہیں آرہی ہے۔

شامی وزارت اطلاعات کے ایک عہدیدار کے مطابق ڈی مستورا کے چیف آف سٹاف خولہ مطر کی سربراہی میں ایک وفد نے حلب کے گورنر محمد مروان علابی سے منگل کے روز ملاقات کی ہے۔ اس موقع پر مزید تفصیلات جاری نہیں کی گئی ہیں۔

اقوام متحدہ کا یہ وفد مقامی اپوزیشن فوج کے باوجود حلب میں فیکٹ فائنڈنگ مشن پر آیا تھا۔ کسی زمانے میں شام کے معاشی مرکز کے طور پر مشہور شہر حلب میں اب خانہ جنگی کی وجہ سے ہر جگہ تباہی کے منظر دیکھنے کو ملتے ہیں اور شہر بشار الاسد کی وفادار فوج اور باغیوں کے درمیان تقسیم ہے۔

ڈی مستورا نے پچھلے ماہ کے دوران بشار الاسد کو "آخری حل" کے حصے کے طور پر پیش کئے جانے پر حزب اختلاف اقوام متحدہ کے وفد سے ناراض ہوگئی تھی۔

شام میں مارچ 2011ء سے جاری لڑائی کے نتیجے میں اب تک 220٫000 افراد اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔