.

سیناء :مارٹر گولے کے حملے میں پانچ مصری ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کے شورش زدہ علاقے شمالی سیناء میں ایک گاؤں میں مکان پر مارٹر گولہ گرنے سے پانچ افراد ہلاک اور چار زخمی ہوگئے ہیں۔

فوری طور پر یہ واضح نہیں ہوا کہ یہ مارٹر گولہ کس نے فائر کیا ہے۔جزیرہ نما شمالی سیناء میں داعش سے وابستہ جنگجو گروپ اور مصری سکیورٹی فورسز ایک دوسرے کے خلاف برسرپیکار ہیں اور وہ لڑائی کے دوران مارٹر گولے استعمال کرتے رہتے ہیں۔

حالیہ ایام میں داعش سے وابستہ صوبہ سیناء گروپ کے مصری سکیورٹی فورسز پر حملوں میں تیزی آئی ہے جبکہ مصری فوج نے بھی اس جنگجو گروپ کے خلاف کارروائیاں تیز کردی ہیں۔اس نے سوموار کو ایک بیان میں کہا تھا کہ یکم جولائی اور پانچ جولائی کے درمیان شمالی سیناء میں فضائی حملوں اور زمینی کارروائیوں میں دو سو اکتالیس جنگجوؤں کو ہلاک کردیا گیا ہے جبکہ اس دوران اکیس فوجی جہادیوں کے حملوں میں ہلاک ہوگئے ہیں۔

واضح رہے کہ شمالی سیناء میں جنگجو گذشتہ کئی سال سے مصری سکیورٹی فورسز کے خلاف برسرپیکار تھے لیکن جولائی 2013ء میں ملک کے پہلے منتخب صدر ڈاکٹر محمد مرسی کی برطرفی کے بعد سے ان کی کارروائیوں میں تیزی آئی ہے اور گذشتہ دوسال کے دوران ان کے حملوں میں سکیورٹی فورسز کے سیکڑوں اہلکار ہلاک ہوچکے ہیں۔مصری فوج نے اب ان کے خلاف لڑائی کے لیے تازہ دم دستے ،مزید ٹینک اور بکتربند گاڑیاں بھیجی ہیں۔مصر کی بری فوج کے علاوہ فضائیہ بھی داعش سے وابستہ ان جنگجوؤں کے خلاف کارروائیوں میں حصہ لے رہے ہیں۔