.

شام: تنظیم خراسان کا بانی امریکی فضائی حملے میں ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی فوج نے القاعدہ کے ایک اہم سابق کمانڈر اور خراسان نامی عسکری گروپ کے بانی محسن الفضلی کو شام میں ایک فضائی حملے میں ہلاک کرنے کا دعوی کیا ہے۔ امریکی فوج کا کہنا ہے کہ الفضلی کو آٹھ جولائی کو ایک فضائی آپریشن کے دوران نشانہ بنایا گیا تھا۔

خیال رہے کہ محسن الفضلی القاعدہ کے اہم رہنمائوں میں شمار ہوتا رہا ہے۔ اسے کویت میں القاعدہ سے تعلق کے شبے میں حراست میں لیا گیا تھا تاہم ناکافی ثبوتوں کی بناء پراسے رہا کر دیا گیا تھا۔ اس کے بعد وہ طویل عرصہ روپوش رہا۔

بعد ازاں اسے ایک بار پھر افغانستان، پاکستان اور ایران میں بھی دیکھا گیا تھا۔ روپوشی کے دوران ہی محسن الفضلی نے القاعدہ کی ایک ذیلی تنظیم "خراسان" کی بنیاد رکھی اور مختلف تنصیبات پرحملے شروع کردیے۔ ایک سال قبل تنظیم خراسان کو شام میں سرگرم دیکھا گیا۔ امریکی خفیہ اداروں نے الفضلی کے سرکی قیمت 50 لاکھ ڈالر مقرر کی تھی۔