.

یمنی صدر عبد ربہ منصور ہادی کی یو اے ای دورے پر آمد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے صدر عبد ربہ منصور ہادی بدھ کے روز دو روزہ دورے پر متحدہ عرب امارات پہنچے، حکام نے دورے کے بارے میں مزید کوئی تفصیل نہیں بتائی۔

متحدہ عرب امارات یمن کی آئینی حکومت کے خلاف حوثی باغیوں کی مسلح بغاوت کو ناکام بنانے کے لیے سعودی عرب کی قیادت میں سر گرم عرب اتحادیوں کی کوششوں کا پرجوش حامی ہے۔

اس سال کے اوائل میں شیعہ مسلک کے پیروکار ایران نواز حوثی باغیوں کی یمن کے متعدد شہروں میں پیش قدمی کے بعد سے صدر ہادی اور ان کی کابینہ کے متعدد ارکان سعودی عرب پناہ لینے پر مجبور ہوئے۔

یو اے ای اس سال مارچ سے باغیوں کے خلاف سعودی قیادت میں جاری مہم میں شریک ہے۔ اس کارروائی کو امریکی حمایت بھی حاصل ہے۔ ابوظہبی اور ریاض نے یمن کی حکومت نواز فوج کو ٹینکوں سمیت دوسرا لڑاکا ساز و سامان فراہم کیا ہے۔ یمن میں فوجی لشکر کشی کی حالیہ میں یو اے ای کے فوجی جاں سے بھی ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔

یمن کے فوجی اور سیکیورٹی حکام کا کہنا ہے کہ مشتبہ امریکی ڈرون حملے میں القاعدہ کے پانچ جنگجو ہلاک ہوئے۔ مارے جانے والے جنگجو انتہا پسندوں کے زیر نگین ساحلی شہر مکلا میں ایک گاڑی میں سوار تھے۔

حکام کے مطابق یہ کارروائی بدھ کے روز شہر کے مشرقی علاقے میں کی گئی۔