.

دمشق میں باغیوں کی راکٹ باری سے 11 شہری ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام کے دارالحکومت دمشق میں باغیوں کے راکٹ حملے میں گیارہ افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے ہیں۔

برطانیہ میں قائم شامی آبزرویٹری برائے انسانی حقوق نے اطلاع دی ہے کہ دمشق کے جنوب مشرقی علاقے میں شہری آبادی پر باغیوں کی جانب سے فائر کیا گیا راکٹ گرا ہے۔اس حملے میں گیارہ افراد ہلاک اور بیس افراد زخمی ہوئے ہیں۔

شام کی سرکاری خبررساں ایجنسی سانا نے ہفتے کے روز اطلاع دی ہے کہ باغیوں کی گولہ باری سے چار افراد ہلاک اور پچیس زخمی ہوئے ہیں۔واضح رہے کہ دمشق کے نواحی علاقوں پر شامی باغیوں کا قبضہ ہے اور وہ آئے دن دارالحکومت پر گولہ باری کرتے رہتے ہیں جس کے نتیجے میں سیکڑوں افراد ہلاک ہوچکے ہیں اور ان میں زیادہ تر عام شہری تھے۔

ان حملوں کے ردعمل میں شامی فوج دمشق کے نواحی علاقوں مشرقی غوطہ اور دوما میں باغیوں کے ٹھکانوں پر بمباری کرتی رہتی ہے۔پیرس میں قائم ڈاکٹروں کی تنظیم طبیبان ماورائے سرحد نے ایک رپورٹ میں بتایا ہے کہ صرف اگست میں ان دونوں علاقوں میں شامی فوج کے فضائی حملوں میں تین سو ستتر افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

دمشق پر اس راکٹ حملے سے قبل باغی گروپ جیش الاسلام نے جمعہ کے روز شام کی سب سے بڑی جیل پر دھاوا بولا تھا۔شامی آبزرویٹری کی اطلاع کے مطابق جیش الاسلام کے جنگجوؤں نے عذرا جیل کی دو عمارتوں پر قبضہ کر لیا ہے۔