.

داعش نے تدمر میں قوس النصر کو بھی دھماکے سے اڑا دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شدت پسند تنظیم دولت اسلامیہ #عراق وشام #داعش نے #شام کے تاریخی شہر #تدمر میں چند ماہ قبل دو تاریخی چرچوں کو مسمار کرنے کے بعد شہر میں "فتح کی علامت دروازہ" قوس النصر کو بھی دھماکےسے اڑا دیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق شام میں انسانی حقوق کی صورت حال پر نظر رکھنے والے ادارے "آبزویٹری" کے مطابق شامی آثار قدیمہ کے ڈائریکٹر مامون عبدالکریم نے بتایا کہ ہمیں محاذ جنگ سے یہ اطلاعات ملی ہیں کہ داعش نے کل اتوار کو تدمر شہر میں "قوس النصر" کو بھی مسمار کردیا ہے۔ چند ہفتے قبل اسی شہر میں داعش نے دو چرچوں سمیت شہر کی کئی تاریخی عمارات کو دھماکوں سے تباہ کر ڈالا تھا۔

قوس النصر شاہراہ الاعمدہ پر واقع ہے۔ رومن دور میں بنائی گئی یہ تاریخی عمارت ایک ہزار سال پرانی بتائی جاتی ہے۔