.

فرانس کے طیارہ بردار جہاز سے داعش پر نئے حملے

عراق اور شام میں داعش پر امریکی اتحادیوں اور روس کی بمباری جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

فرانس کے لڑاکا طیاروں نے بحرمتوسطہ کے مشرق میں بھیجے گئے بحری بیڑے چارلس ڈی گال سے اڑان بھرنے کے بعد عراق اور شام میں داعش کے جنگجوؤں کے خلاف آپریشن شروع کردیا ہے۔

اس دوران روس نے کہا ہے کہ اس کے لڑاکا طیاروں نے گذشتہ دو روز میں جنگ زدہ شام میں 472 اہداف کو نشانہ بنایا ہے۔ان میں داعش کے زیرقبضہ علاقوں میں ٹینکروں اور تیل کے انفرااسٹرکچر پر بھی بمباری کی گئی ہے۔

روسی وزارت دفاع نے سوموار کو جاری کردہ ایک بیان میں کہا ہے کہ ''گذشتہ دو روز میں 141 فضائی حملوں میں شام کے صوبوں حلب ،دمشق ،ادلب ،اللاذقیہ ،حماہ ،حمص ،الرقہ اور دیرالزور میں دہشت گردوں کے اہداف کو نشانہ بنایا گیا ہے''۔

بیان کے مطابق روسی فضائیہ کے ان حملوں میں داعش کے مضبوط گڑھ الرقہ کے نزدیک 80 ٹینکر ٹرکوں ،تیل ذخیرہ کرنے کے ایک بڑے ٹینک اور شہر کے جنوب میں واقع ایک آئیل ریفائنری کو تباہ کردیا گیا ہے۔دیرالزور کے شمال میں پچاس کلومیٹر دور واقع تیل کے ڈپوؤں کو بھی فضائی بمباری میں تباہ کردیا گیا ہے۔

روسی فوج نے یہ دعویٰ کیا ہے کہ شمال مغربی صوبے ادلب میں واقع شہر سراقب میں ''دہشت گردوں'' کو بھاری نقصان پہنچا ہے۔روسی طیارے شام میں داعش کی کمائی کا اہم ذریعہ تیل کی تنصیبات اور ٹینکروں کو خاص طور پر نشانہ بنا رہے ہیں اور انھوں نے گذشتہ پانچ روز میں قریباً ایک ہزار ٹینکروں کو تباہ کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

روسی صدر ولادی میر پوتین نے گذشتہ ہفتے شام میں داعش کے جنگجوؤں کے خلاف فضائی مہم تیز کرنے کا حکم دیا تھا۔روس کا کہنا ہے کہ وہ فضائی حملوں میں داعش اور دوسرے جنگجو گروپوں کو فضائی حملوں میں نشانہ بنا رہا ہے جبکہ قبل ازیں مغربی ممالک یہ کہتے رہے ہیں کہ روس کے لڑاکا طیارے شامی صدر بشارالاسد کے مخالف اعتدال پسند جنگجو گروپوں پر بمباری کر رہے ہیں۔وزارت دفاع نے امریکا کے اس ''بے بنیاد'' دعوے کو بھی مسترد کردیا ہے کہ وہ داعش کے ٹھکانوں کو نشانہ نہیں بنا رہا ہے۔

درایں اثناء امریکا اور اس کے اتحادیوں نے بھی شام اور عراق میں داعش کے ٹھکانوں پر اختتام ہفتہ پر کیے گئے فضائی حملوں کی اطلاع دی ہے۔شام کے شہروں دیرالزور اور الحسکہ میں اتوار کو دو فضائی حملوں میں داعش کی تین سو گاڑیاں اور تیل کی تنصیبات تباہ کردی گئی ہیں۔ہفتے کے روز اتحادی طیاروں نے شام میں نو فضائی حملے کیے تھے۔

اتحادی فوج کی جانب سے سوموار کو جاری کردہ بیان کے مطابق عراق کے گیارہ شہروں کے نزدیک اتوار کو داعش کے اہداف پر انیس فضائی حملے کیے گئے تھے اور چودہ شام کے پانچ شہروں کے نزدیک کیے گئے تھے۔