.

ملکہ رانیا کا اسپین میں بائیولوجیکل ریسرچ سینٹر کا دورہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اردن کے فرمانروا شاہ عبداللہ دوم کے دورہ اسپین کے دوران ملکہ رانیا نے عبداللہ نے میڈریڈ میں قائم "میڈیا لاپ براڈو" نامی حیاتیاتی تحقیقاتی مرکز کا دورہ کیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ملکہ رانیا نے اسپین میں قائم سائنسی تحقیقی مرکز وہاں پر کام کرنے والے ماہرین سے ملاقات کی اور ریسرچ سینٹر میں مخلتف شعبوں میں ہونے والی تحقیقات پر تبادلہ خیال کیا۔

یاد رہے کہ مڈریڈ میں قائم سائنسی ریسرچ سینٹر میں فزیالوجی، کینسر کے مرض اور جسم میں مدافعاتی نظام کے بیکٹیریاز سمیت دیگر موضوعات پر تحقیق کی جاتی ہے۔

ملکہ رانیا کے دورے کے دوران ریسرچ سینٹر کے ماہرین نے دور حاضر کی انوکھی بیماریوں اور ان کے اسباب و علامات سے متعلق اپنی تحقیقات سے بھی آگاہ کیا۔

اس موقع پر ایک ریسرچ اسکالر نے بتایا کہ ہر انوکھی بیماری کم سے کم 2000 افراد میں سے ایک کو لاحق ہوتی ہے۔ ایسی بیماریوں کا شکار ہونے والوں میں 50 فی صد بچے ہوتے ہیں۔ ریسرچ سینٹر میں 7000 بیماریوں کے 400 قسم کے طریقہ ہائے علاج دریافت کیے گئے ہیں۔ ماہرین نے بتایا کہ موروثی امراض کے علاج کے لیے گلے سڑے پھلوں پر بیٹھنے والی مکھی"میوہ مگس" کو امراض کے علاج کے لیے کس طرح استعمال کیا جاتا ہے۔

ملکہ رانیا نے "میڈیا لاپ براڈو" کی تجربہ گاہ کا بھی وزٹ کیا اور لیبارٹری میں جاری تجربات کو ملاحظہ کیا۔ تجربہ گاہ میں موجود ماہرین نے وہاں پر ہونے والی تحقیقات بالخصوص مائیکرو آپٹیکل آلات کے استعمال، فرنیچر اسکینرز اور تجرباتی ویڈٰیو گیمز کے بارے میں بریفنگ دی گئی۔