غرب اردن میں اسرائیلی فوج نے 4 فلسطینی شہید کر دئیے

اکتوبر کے آغاز سے 114 فلسطینی اسرائیلی گولیوں کا نشانہ بن چکے ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیلی فوج نے جمعہ کے روز چار فلسطینی شہید کر دیئے۔ قابض فوج نے دعوی کیا ہے کہ شہید کئے جانے والے فلسطینی اسرائیلی شہریوں اور فوجیوں پر چاقو حملے اور انہیں گاڑی تلے کچلنا چاہتے تھے۔

مغربی کنارے کے تاریخی شہر الخلیل میں دو اسرائیلی فوجیوں کو چاقو گھونپے کی پاداش میں دو فلسطینی لڑکوں کو اسرائیلی فوج نے جان سے مارا ڈالا۔ مبینہ طور پر فلسطینیوں کے چاقو حملوں کا نشانہ بننے والے دونوں اسرائیلی فوجیوں کو درمیانے درجے کے زخم آئے۔

فلسطینی وزارت صحت نے بتایا کہ ایک فلسطینی نوجوان رام اللہ کے گاؤں عابود میں گولی مار کر ہلاک کیا۔

فلسطینی نیوز ایجنسی 'معا' نے عبرانی ویب پورٹلز کے حوالے سے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ 'نواہ تسوو' نامی یہودی بستی کے قریب فلسطینی نوجوان کے چاقو حملے سے اسرائیلی فوجی شدید زخمی ہوا۔

اسرائیلی فوج نے مشرقی رام اللہ کے قریبی گاؤں سلواد میں دو اسرائیلی فوجیوں کو گاڑی تلے کچلنے کی کوشش کرنے والے فلسطینی نوجوان کو گولی مار کر شہید کر دیا۔

اس کارروائی کے بعد اکتوبر کے آغاز سے ابتک اسرائیلی فوجیوں کے ہاتھوں شہید ہونے والے فلسطینیوں کی تعداد 114 ہو گئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں