یمنی شہریوں کے لیے وزٹ ویزے کی مدت میں چھ ماہ کی توسیع

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی حکومت نے ملک میں وزٹ ویزے پر آنے والے یمنی شہریوں کی مملکت میں قیام کی مدت میں مزید چھ ماہ کی توسیع کر دی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق سعودی عرب کے ولی عہد اور وزیرداخلہ شہزادہ محمد بن نایف بن عبدالعزیز نے پڑوسی برادر ملک یمن کے وزٹ ویزے پر آئے شہریوں کو مزید چھ ماہ تک سعودی عرب میں قیام کرنے کا موقع دیا ہے۔ سعودی عرب کے پاسپورٹ وایمی گریشن ڈاریکٹوریٹ جنرل نے ولی عہد کے فیصلے پرعمل درآمد کی تیاریاں شروع کر دی ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق سعودی عرب کے جنرل ڈاریکٹوریٹ برائے پاسپورٹس کی جانب سے جاری کردہ ایک وضاحتی بیان میں کہا گیا ہے کہ حکومت نے ملک میں وزٹ ویزے پر آئے یمنی شہریوں کو خوشی سنائی ہے۔ ایسے تمام یمنی شہری جو وزٹ ویزے پر سعودی عرب آئے ہیں وہ مزید چھ ماہ تک مملکت میں رہ سکتئے ہیں۔

وزٹ ویزے پر آنے والے یمنی شہری نہ صرف ملک میں چھ ماہ تک قیام کر سکتے ہیں بلکہ وہ کوئی ملازمت بھی کر سکتے ہیں۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ سعودی عرب میں سیاحتی ویزے پر آنے والے یمنی شہریوں کے قیام کی مدت میں توسیع کا فیصلہ 20 ربیع الاول 1437ھ تک مکمل کر لیا جائے گا۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ کسی بھی یمنی شہری کو اپنے وزٹ ویزے کی مدت میں توسیع کے لیے الگ سے درخواست دینے کی ضرورت نہیں ہو گی۔ حکومت خود کار طریقے سے تمام یمنی ویزہ حاملین کو چھ ماہ تک رہنے کی سہولت فراہم کرے گی اور ویزے کی مدت میں توسیع کر دی جائے گی۔ البتہ ایسے تمام یمنی شہریوں کو 100 ریال کی معمولی فیس ادا کرنا ہو گی۔ بیان میں وضاحت کی گئی کہ یمنی شہری وزٹ ویزے میں توسیع کی خدمات وزارت داخلہ کی ویب سائیٹ ’’ابشر‘‘ کے ذریعے حاصل کر سکیں گے۔

البتہ انہیں وزٹ ویزے کی مدت میں توسیع کے لیے مختص فیس ڈاک کے ذریعے جمع کرانی ہو گی اور’’واص‘‘ پوسٹل سروسز کے ذریعے وہ تبدیل شدہ ویزہ بھی حاصل کر سکیں گے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں