.

داعش گروپ کا سیناء سے اردن جانے والی گیس پائپ لائن پر بم حملہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر میں سخت گیر جنگجو گروپ دولت اسلامیہ عراق وشام (داعش) کی شاخ نے شورش زدہ علاقے سیناء میں گیس کی ایک پائپ لائن کو دھماکے سے اڑا دیا ہے۔اس پائپ لائن کے ذریعے اردن اور شمالی سیناء میں ایک صنتعی زون کو گیس مہیا کی جاتی ہے۔

سکیورٹی ذرائع نے واقعے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ حملہ آور جنگجوؤں نے شمالی سیناء میں واقع ایک گاؤں المیدان میں پائپ لائن کے نیچے دھماکا کیا ہے لیکن اس سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوا ہے۔

شمالی سیناء میں داعش سے وابستہ جنگجو گروپ ''صوبہ سیناء'' مصری سکیورٹی فورسز کے خلاف برسرپیکار ہے۔اس گروپ نے ٹویٹر پر پوسٹ کیے گئے ایک پیغام میں اس حملے کی ذمے داری قبول کی ہے اور لکھا ہے کہ ''اللہ کے نام سے ،اب گیس کا ایک ذرہ بھی خلافت کی اجازت کے بغیر اردن نہیں جائے گا''۔

واضح رہے کہ اردن دوسرے بہت سے عرب ممالک کے ساتھ امریکا کی قیادت میں داعش مخالف اتحاد میں شامل ہے اور اس کے لڑاکا طیارے بھی عراق اور شام میں داعش کے ٹھکانوں پر بمباری کررہے ہیں۔

مصر میں 2011ء کے اوائل میں سابق صدر حسنی مبارک کے خلاف عوامی احتجاجی تحریک کے آغاز کے وقت سے جنگجو جزیرہ نما سیناء میں گیس اور تیل کی پائپ لائنوں پر بیسیوں حملے کرچکے ہیں۔ان بم حملوں کے بعد اردن کے علاوہ اسرائیل کو بھی گیس کی سپلائی منقطع ہوتی رہی ہے۔