.

یمنی فوج صنعاء کو عنقریب فتح کرنے کیلیے پرامید

ملک سے باغیوں کی صفائی کا وقت قریب آ گیا: جنرل المقدشی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی مسلح افواج کے سربراہ میجر جنرل محمد المقدشی نے کہا ہے کہ فوج جلد ہی دارالحکومت صنعاء سے بھی باغیوں کو نکال باہر کرتے ہوئے صنعاء کا کنٹرول سنھبال لے گی۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق جنرل المقدشی نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ فوج ملک اور قوم کے دفاع کی جنگ لڑ رہی ہے۔ انہوں نے فوج کے افسروں اور سپاہیوں پر زور دیا کہ وہ باغیوں کے خلاف جاری آپریشن کے دوران قومی املاک اور سرکاری اداروں کا تحفظ یقینی بنائیں۔ جنرل المقدشی نے کہا کہ یمن کے بقیہ تمام شہروں اور دیہات کو بھی جلد ہی باغیوں سے چھڑا لیا جائے گا۔

ادھر یمن میں محاذ جنگ سے ملنے والی اطلاعات میں بتایا گیا ہے کہ فوج اور حکومت نواز مزاحمتی فورسز نے صنعاء کے قریب تبۃ المعین کے مقام کا کنٹرول سنھبال لیا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ صنعاء کے مشرقی علاقے فرضنہ نھم کے قریب تبۃ المعین میں حکومتی فورسز اور باغیوں کے درمیان خون ریز لڑائی کے بعد وہاں سے باغیوں کو پسپا کر دیا گیا۔

ادھر الضالع گورنری کے شمالی شہر جمک میں حوثی باغیوں اور علی صالح کے وفاداروں کا حملہ ناکام بنا دیا۔ حکومتی فوروسز کے جوابی حملے میں باغیوں کو بڑے پیمانے پر جانی نقصان اٹھانا پڑا ہے۔

ادھر تعز میں اتحادی طیاروں نے باغیوں کے ٹھکانوں پر کئی فضائی حملے کیے ہیں جس کے نتیجے میں دسیوں حوثی باغی ہلاک اور زخمی ہوئے ہیں۔ اتحادی طیاروں نے الشریجہ کے مقام پر حوثیوں کے ایک اسلحہ ڈپو کو نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں اسلحہ تباہ ہو گیا۔