.

اسرائیلی فوج نے پانچ فلسطینی خون میں نہلا دیئے

مبینہ حملہ آور پر چاقو حملے کے پیش نظر مقبوضہ شہر میں فائر کھولا: اسرائیلی پولیس کا دعوی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیلی پولیس حکام کے مطابق مغربی القدس اور مقبوضہ مشرقی بیت المقدس کو ملانے والی پرانی فیصل شہر کے باہر دو فلسطینیوں کو اس وقت گولی مار کر شہید کر دیا جب وہ مبینہ طور پر پولیس اہلکاروں پر فائرنگ کر رہے تھے۔ اس واقعہ کے بعد اتوار کے روز اسرائیلی مظالم کا شکار بننے والے فلسطینیوں کی تعداد پانچ ہو گئی ہے۔

پولیس ترجمان میکی روزنفیلڈ نے ایک غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کو بتایا کہ "وہ دہشت گردوں کو اسرائیلی پولیس اہلکاروں نے فائرنگ کر کے ہلاک کر دیا ہے" کیونکہ بقول روزنفیلڈ "دونوں نے سیکیورٹی فورسز پر فائرنگ کی تھی۔"

انہوں نے مزید بتایا کہ حملہ آور فلسطینیوں کی گولیوں سے 'کوئی [اسرائیلی] پولیس اہلکار زخمی نہیں ہوا۔'

اس واقعہ کے بعد اتوار کے روز مقبوضہ فورسز کے ہاتھوں شہید ہونے والے فلسطینیوں کی تعداد پانچ ہو گئی جن میں تین لڑکے شامل ہیں جو اسرائیلی حکام کے مطابق مقبوضہ مشرقی بیت المقدس اور غرب اردن کے علاقے میں اسرائیلی فوج اورپولیس پر حملے کی کوشش میں مارے گئے۔