.

سعودی عرب:منشیات کے جرائم میں ملوث 953 افراد گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی وزارت داخلہ نے کہا کہ انسدادی منشیات پولیس نے پچھلے سال اور رواں برس میں محرم، صفر، ربیع الاول اور ربیع الثانی کے دوران نو سو53 افراد کو حراست میں لیا جن پر منشیات کی اسمگلنگ اور اس کی ترویج میں ملوث عناصر شامل ہیں۔ منشیات کیسز میں گرفتار ہونے والے ملزمان میں 258 مقامی ہیں جب کہ 695 ملزمان کا تعلق 35 مختلف ملکوں سے ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق سعودی عرب کی وزارت خارجہ کے ترجمان نے ایک نیوز کانفرنس میں بتایا کہ منشیات مافیا کے خلاف آپریشن میں ایک سیکیورٹی اہلکار جاں بحق اور 28 زخمی ہوئے جب کہ پانچ منشیات فروش ہلاک اور 13 زخمی ہوئے۔

ترجمان نے بتایا منشیات کے اسمگلروں کے خلاف کارروائیوں میں ان سے نہ صرف بھاری مقدار میں منشیات کی مختلف اقسام قبضے میں لی گئیں بلکہ اسلحہ اور بھاری رقوم بھی ضبط کی گئی ہیں۔ منشیات مافیا کےخلاف کارروائیوں میں ضبط کی گئی منشیات کی تفصیل ہے۔

نمبر1، ایم فیٹامین کی 26 ملین 4 لاکھ 80 ہزار 328 گولیاں قبضےمیں لی گئیں۔ نمبر دو 16 ٹن 118 کلو گرام حشیش پکڑی گئی۔ نمبر تین چھ کلو گرام، 252 گرام اور 100ملی گرام خام ہیروئن ضبط کی گئی، نمبر چار دو کلو گرام، 138 گرام اور 700 ملی گرام تیار حالت میں ہیروئن ضبط کی گئی، نمبر پانچ چھ لاکھ 97 ہزار 897 نشہ آور ادویات کی گولیاں ضبط کی گئیں۔ چھٹے نمبر پر401 کلو گرام، 578 گرام اور 200 ملی گرام کوکین اور ساتویں نمبر پر دو کلو گرام،950 گرام اور 500 ملی گرام الشبو نامی بوٹی پکڑی گئی۔ آٹھویں نمبر پر 565 گرام اور 790 ملی گرام افیون، نویں نمبر پر339 اقسام کے ممنوعہ ہتھیار جن میں 36 کلاشنکوفیں،258 پستول اور 45 بندوقیں شامل ہیں قبضے میں لی گئیں۔ دسویں نمبر پر8 ہزار 497 آتشیں گولیاں اور گیارہویں نمبر پر 2کروڑ، 65 لاکھ، 82 ہزار 831 ریال کی رقم قبضے میں لی گئی۔

منشیات کیسزمیں گرفتار ہونے والے تمام ملزمان کو عدالتوں میں پیش کیا گیا۔ ان میں سے بعض کو سزائیں سنائی جا چکی ہیں جب کہ کئی کا ٹرائل جاری ہے۔