.

توہین رسالت کے مرتکب مصری وزیر انصاف برطرف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کی حکومت نے مبینہ طور توہین رسالت کے مرتکب وزیر انصاف ایڈوکیٹ احمد الزند کو ان کے عہدے سے ہٹانے کا فیصلہ کیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق مصری وزیراعظم انجینیر شریف اسماعیل نے ایک ٹی وی پروگرام میں رسول کریم کے بارے میں نا مناسب الفاظ استعمال کرنے پر وزیرانصاف کو ان کے عہدے سے ہٹا دیا ہے۔ خیال رہے کہ احمد الزند نے ایک ٹی وی شو میں بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ ان کے خاندان کی توہین کرنے والوں کو جیل جانا پڑے گا چاہے وہ نبی ہی کیوں نہ ہو۔ ان کے اس متنازع بیان پرمصری عوام میں سخت غم وغصے کی لہر دوڑ گئی گئی اورملک بھرمیں ان کے استعفے کا مطالبہ کیا جا رہا تھا۔

مصری حکومت کے ایک ذریعے نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ وزیراعظم شریف اسماعیل نے وزیر انصاف کو ہدایت کی تھی کہ وہ نبی کی شان میں گستاخانہ ریمارکس کے بعد کابینہ سے خود ہی مستعفی ہو جائیں مگر وزیرانصاف نے خود استعفیٰ دینے سےانکار کر دیا تھا۔ اس پر وزیراعظم کو از خود نوٹس لیتے ہوئے انہیں برطرف کر دیا ہے۔