.

جان کیری کی بغداد آمد ،داعش کے خلاف جنگ پر تبادلہ خیال

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی وزیر خارجہ جان کیری عراق کے غیرعلانیہ دورے پر جمعہ کے روز بغداد پہنچ گئے ہیں۔انھوں نے عراق کے وزیر اعظم حیدر العبادی اور دوسرے عہدے داروں سے ملاقات کی ہے اور ان سے داعش کے خلاف جنگ پر تبادلہ خیال کیا ہے۔

وہ عراقی وزیر خارجہ ،سنی عہدے داروں اور کردستان کے علاقائی لیڈروں سے بھی ملاقات کرنے والے تھے۔وہ انھیں امریکا کی جانب سے عراق کی سلامتی ،معاشی اور سیاسی جدوجہد میں مدد کی یقین دہانی کرائیں گے۔

جان کیری نے جمعرات کو بحرین میں کہا تھا کہ عراقی حکومت کو متحد ہوکر اپنے ملک کی تعمیر نو کرنی چاہیے اور داعش کے زیر قبضہ علاقوں کو واپس لینا چاہیے۔ان کا کہنا تھا کہ عراق کے ہمسایہ ممالک کو بھی حیدرالعبادی کی حکومت کی ملک کو مستحکم بنانے اور تعمیرنو کے لیے کوششوں میں حمایت کرنی چاہیے۔

انھوں نے داعش کے کنٹرول سے آزاد کرائے جانے والے سنی اکثریتی علاقوں میں تعمیر وترقی پر زوردیا ہے۔وہ یہ دورہ ایسے وقت میں کررہے ہیں جب عراقی فورسز نے داعش کے خلاف فوجی پیش قدمی جاری رکھی ہوئی ہے اور وہ جمعرات کو تزویراتی اہمیت کے حامل قصبے ہیت میں داخل ہوگئی ہیں جبکہ امریکی فوج شمالی شہر موصل کی داعش سے بازیابی کے لیے عراقی فوج کی مدد کی غرض سے ایک فوجی اڈا قائم کرنا چاہتی ہے۔وہاں سے داعش کے ٹھکانوں پر گولہ باری کی جاسکے گی۔