.

یمن : گھات لگا کر حملہ.. 20 فوجی ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں فوجی ذرائع نے بتایا ہے کہ ہفتے کے روز ملک کے جنوب میں القاعدہ تنظیم کے جنجگوؤں نے گھات لگا کر سرکاری فوج کے کم از کم 20 سپاہیوں کو ہلاک کردیا۔ تاہم القاعدہ تنظیم کی جانب سے اس کارروائی کی تردید کی گئی ہے۔

ذرائع نے اپنی شناخت ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ "القاعدہ کے مسلح عناصر نے ابین صوبے میں 3 گاڑیوں پر سوار فوجیوں کو گھات لگا کر نشانہ بنایا جس کے دوران تقریبا 20 فوجی اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے"۔

ذرائع نے مزید بتایا کہ "مذکورہ شدت پسندوں نے ساحلی شہر احور میں صبح سویرے ان فوجیوں کو اجتماعی طور پر قتل کرنے کے لیے گاڑیوں سے اتارا"۔

ادھر دیگر ذرائع کا کہنا ہے کہ شدت پسندوں نے ان فوجیوں کو اس وقت اغوا کرلیا جب وہ جنوبی صوبے عدن سے احور شہر کے راستے ملک کے مشرقی صوبے المہرہ کی جانب جارہے تھے۔ ابین صوبے میں واقع شہر احور پر شدت پسندوں کا کنٹرول ہے۔

ذرائع نے تصدیق کی کہ ہلاک کیے گئے فوجی یمنی فوج میں حال ہی میں بھرتی کیے گئے تھے۔

دوسری جانب یمن میں القاعدہ تنظیم کے ونگ نے ہفتے کے روز انٹرنیٹ پر جاری کیے گئے ایک بیان میں یمنی فوجیوں کی ہلاکت کی ذمہ داری قبول کرنے سے انکار کردیا۔