.

شام: الرقہ میں سزائے موت سنانے والا "داعشی قاضی" ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام کے شہر الرقہ پر بین الاقوامی اتحادی افواج کے حملوں میں داعش تنظیم کا ایک کمانڈر فواز الحسن عرف "ابو علی الشرعی" ہلاک ہو گیا۔ اتوار کی صبح مارا جانے والا یہ کمانڈر شہر میں تنظیم کا قاضی (مقدمات کے فیصلے سنانے والا جج) بھی تھا۔

تنظیم کے منحرف ارکان اور عام شہریوں کے خلاف موت کے احکامات جاری کرنے کی ایک لمبی فہرست کے سبب فواز الحسن بڑی حد تک معروف تھا۔ اسے تنظیم میں "پہلا شرعی قاضی" سمجھا جاتا ہے۔ 2013 کے نصف سے اس کے پاس منصورہ میں "شرعی عدالت" کی ذمہ داریاں تھیں۔ بعد ازاں الرقہ شہر میں "شرعی عدالت" کو اس کے حوالے کردیا گیا۔ یہ تفصیلات تنظیم کی جانب سے شہر میں جاری قتل کی مہم "الرقہ میں خاموش ذبیحہ" کی ویب سائٹ پر جاری کی گئیں۔

کہا جاتا ہے کہ فواز الحسن اپنے ہاتھوں 100 سے زیادہ افراد کے خلاف موت کے احکامات جاری ہونے پر فخر محسوس کرتا تھا۔